سیری پوری بگن میں پانی کی شدید قلت

گول//جہاں ایک طرف سے سرکار یہ دعویٰ کر رہی ہے کہ ’’ہر گھر نل ‘‘مہم چلائی جا رہی ہے لیکن وہیں طرف اگر چہ نل ہے لیکن وہ بناء جل ہے جس وجہ سے لوگ کافی پریشان ہیں ۔ محکمہ جل شکتی کا دعویٰ ہے کہ ہر جگہ پانی کی بہتر سپلائی دی جا رہی ہے جس پر کروڑوں روپے خرچ کئے گئے لیکن اگر زمینی سطح پر دیکھا جائے تو لوگ بوند بوند کے لئے ترس رہے ہیں ۔ ہم بات کریں گے  گول کے ٹھٹھارکہ بگن علاقہ کی جہاں پراس شدت کی گرمی میں بھی لوگ بوند بوند کے لئے ترس رہے ہیں ۔ اس سلسلے میں خواتین نے پینے کے پانی کی شدید قلت کو لے کر خواتین نے احتجاج کرتے ہوئے محکمہ جل شکتی کے خلاف ناراضگی کا اظہار کیا ۔ خواتین کا کہنا ہے کہ ہفتوں سے علاقے میں پانی نہیں آیا جس وجہ سے انہیں کئی کلو میٹر دور پانی لینے کے لئے جانا پڑتا ہے جس وجہ سے وہ کافی پریشان ہیں ۔انہوں نے کہا کہ اگر چہ کئی مرتبہ انتظامیہ ، پنچایتی نمائندوں اور محکمہ سے مطالبہ کیا لیکن کسی نے یہاں کی طرف کوئی توجہ نہیں دی ۔ انہوں نے ضلع انتظامیہ سے مطالبہ کیا کہ علاقے میں پینے کے پانی کی قلت کو جلد از جلد دور کیا جائے تا کہ اس شدت کی گرمی میں لوگوں کو پانی میسر ہو ۔