سیاح خاتون کا روپیوں سے بھرا تھیلا بھی لوٹایااور انعام بھی نہ لیا

ٹنگمرگ //سیاحتی مقام گلمرگ میں سیاح خاتون کا ہزاروں روپیوں سے بھرا پرس گلمرگ ڈیولپمنٹ اتھارٹی کے کیجول ملازم نے واپس لوٹا دیاہے ۔تفصیلات کے مطابق عالمی شہرت یافتہ سیاحتی مقام گلمرگ میں دہلی کی ایک سیاح خاتون کا پرس مہاراجہ پلس کا مشاہدہ کرنے کے دران گر گیا تھا جب مذکورہ سیاح خاتون وہاں سے واپس نکلی تو اس نے اپنا پرس گم پایا ۔اس دران مہاراجہ پلس میں تعینات گلمرگ ڈیولپمنٹ اتھارٹی کے کیجول ملازم محمد شفع مونن نے صحن میں پرس اٹھایا جس میں 25000 ہزار روپے نقد موجود تھے۔ابھی وہ پریس کے مالک کو تلاش ہی کررہا تھا کہ سیاح خاتون بد حواسی میں وہاں پرس تلاش کرنے پہنچ گئی۔جب خاتون سیاح نے مذکورہ ملازم کو بتایا کہ اس کا پرس کہیں گم ہوگیا ہے تو کیجول ملازم نے اسے بتایا کہ آپ کا پرس اس نے اٹھایا ہے تو دہلی کی سیاح خاتون خوشی سے جھوم اٹھی اور انعام کے بطور مذکورہ ملازم کو 5 ہزار روپے دینے کی پیشکش کی جو مذکورہ ملازم نے یہ کہ کر واپس کئے ہیں کہ آپ ہماری مہمان ہیں جس پر سیاح خاتون نے کشمیری عوام کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ جہاں کشمیر کے لوگ مہمان نواز ھے وہیں کافی ایماندار بھی ہیں۔ خیال رہے مذکورہ ملازم جو کہ گلمرگ ڈیولپمنٹ اتھارٹی میں کیجول ملازم کام کررہا ہے گزشتہ 3 ماہ سے باقی کیجول ملازمین کی طرح تنخواہ سے محروم ہے ۔ادھر گلمرگ ڈیولپمنٹ اتھارٹی کے چیف ایگزیکٹو آفسر محمد حنیف بلخی نے کیجول ملازم کی ایمانداری کی داد دیتے ہوئے اسے شاباشی دی ھے ادھر ٹنگمرگ ورکنگ جرنلسٹ اسیو سی ایشن کے صدر اشفاق احمد ڈار نے مذکورہ کیجول ملازم کو عزت افزائی کے لئے  انعام سے نوازنے کا اعلان کیا ہے ۔