سوپور اور اس کے بیشتر علاقوں میں بجلی کٹوتی جاری | مقامی لوگوں میں محکمہ کے خلاف اظہار ناراضگی

سوپور//شمالی قصبہ سوپور اور اس کے گرد نواح میں بجلی کی آنکھ مچولی سے لوگوں کو ذہنی کوفت کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ مقامی لوگوں کا کہنا ہے کہ ان علاقوں میں بیشتر اوقات گھپ اندھیرا چھایا رہتا ہے۔بجلی کی اس قدر کٹوتی اور عدم دستیابی کو لیکر قصبہ اور دیگر علاقوں کے لوگوں نے کئی مرتبہ سڑکوں پر آکر پی ڈی ڈی محکمہ کے خلاف زور دار احتجاج کیا تھا تاہم کافی یقین دہانیوں کے باوجود بھی کوئی ٹھوس اقدام نہیں کیا جارہا ہے ۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ پورے موسم سرما میں گنڈ براٹھ، بومئی، سیر جاگیر، تجرشریف، رامپورہ راجپورہ، جانوارہ، مقام اور ہتھ لنگو وغیرہ میں بجلی سپلائی کافی متاثر رہی۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ گزشتہ تین ماہ سے بجلی کی ناقص فراہمی سے لوگ تنگ آچکے ہیں۔لوگوں کا کہنا ہے کہ گزشتہ سال محکمہ بجلی نے جو کٹوتی شیڈول مرتب کیا اس پر عمل درآمد نہیں کیا جارہا ہے بلکہ علاقوں میں بجلی 24 گھنٹوں میں صرف چھہ سے سات گھنٹے سپلائی رہتی ہے اور لوگوں کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔لوگوں نے بجلی کٹوتی کے پیش نظرضلع انتظامیہ اور محکمہ بجلی کے خلاف برہمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ سوپور کے ان علاقوں کو ہر لحاظ سے نظر انداز کیا جارہا ہے۔ بجلی، پانی اور سڑکوں کی بدحالی اوردیگر بنیادی سہولیات کا بھی علاقے میں فقدان ہے ۔لوگوں نے بجلی محکمہ سے مطالبہ کیا کہ بجلی نظام کو مستحکم بنانے کے لئے فوری طورمؤثر اقدامات کئے جائیں تاکہ لوگوں کے مشکلات کا ازالہ ہوسکے۔