سوپور اورحاجن میں ہاسپٹل ڈیولپمنٹ فنڈ عارضی ملازمین کااحتجاج

سوپور+حاجن//سب ضلع اسپتال سوپوراورحاجن بلاک میں اسپتال ڈیولپمنٹ فنڈ کے تحت کام کررہے متعددعارضی ملازمین نے سوموار کو اپنے مطالبات کے حق میں احتجاج کیااورمطالبہ کیا کہ انہیں مستقل بنایا جائے اوران کی روکی گئی اجرتوں کو واگزار کیاجائے۔انہوں نے کہا کہ وہ حکام کی سردمہری کی وجہ سے سڑکوں پرآنے کیلئے مجبور ہوئے ہیں ۔احتجاجی ملازمین نے اپنے مطالبات کے حق میں نعرے بازی کرتے ہوئے کہاکہ گزشتہ کئی ماہ سے اسپتال انتظامیہ نے ان کی اجرتوں کو واگزار نہیں کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ اس وجہ سے وہ فاقہ کشی کاشکار ہونے کو ہیں ۔انہوں نے کہا کہ ان کیلئے گھر کے خرچہ کا بندوبست کرنا مشکل ہوگیا ہے ۔ان ملازمین نے کہا کہ ہم کورناوائرس کی عالمگیر وباء کے باوجود دن رات کا م کررہے ہیں لیکن ہماری اجرتوں کوواگزار نہیں کیا جارہا ہے ۔طارق احمدنامی ایک ملازم نے کہا کہ ان حالات میں اجرتوں کے بغیر کام کرتے ہوئے ان کیلئے گھر کاگزارہ چلانا مشکل ہوگیا ہے۔  انہوں نے جموں کشمیرکے لیفٹینٹ گورنر منوج سنہا سے انہیں مستقل کرنے اور ان کی اجرتوں کو واگزار کرنے کا مطالبہ کیا۔ادھرحاجن بلاک میں تعینات اسپتال ڈیولپمنٹ فنڈکے تحت کام کررہے ملازمین نے اپنے مطالبات کے حق میں احتجاج کیا جس کی وجہ سے مریضوں کوسخت مشکلات کاسامنا کرناپڑا۔اپنی تعیناتی کو مستقل کرنے کے حق میں محکمہ صحت کے ضلع بانڈی پورہ کے حاجن بلاک میں ہسپتال ڈیولپمنٹ فنڈ ہیلتھ ایمپلائز نے کام چھوڑ کر احتجاج کیا جس کے سبب مریضوں کو سخت مشکلات کا سامنا کر نا پڑا۔بلاک حاجن میں ہسپتال ڈیولپمنٹ فنڈ کے تحت ہیلتھ اورپیرا میڈیکل ملازمین نے ہسپتال احاطہ میں اپنی مانگوں کو لیکراحتجاج کرتے ہوئے جاب سیکورٹی پالیسی بنائو، ہماری مانگیں پوری کرو اور ہماری تعیناتی کو مستقل کرو جیسے نعرے لگاتے ہوئے انتظامیہ سے اپنے مطالبات کو فوری طور پورا کرنے کا مطالبہ کیا۔اس موقع پر احتجاج کرنے والے ملازمین نے بتایا کہ ہم گذ شتہ دس سے پندر ہ برس سے ایچ ڈی ایف سی کے تحت کام کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ ہم نے مشکل ترین حالات کرفیو، ایجی ٹیشن،ہڑتا ل،کوڈ 19 جیسے حالات میں دن رات اپنے فرائض انجام دیئے، تاہم ہماری مستقل تعیناتی کی جانب توجہ نہیں دی جارہی ہے۔انہوں نے کہا کہ ہمیں ایچ ڈی ایف کے بجائے محکمہ خزانہ سے براہ راست تنخواہ ملنی چاہئے۔ساتھ ہی ہماری تعیناتی کو مستقل کیا جانا چاہئے۔