سونہ مرگ میں چوتھے روز بھی بجلی سپلائی منقطع | ہوٹلوں مالکان اور سیاحوں کو مشکلات درپیش

کنگن//صحت افزا مقام سونہ مرگ میں چوتھے روز بھی بجلی کو بحال نہیں کیا گیا جس کے باعث سیاحوں نے سونہ مرگ کے ہوٹلوں میں بکنگ کو منسوخ کردیا گیا۔محکمہ موسمیات کی پیش گوئی کے مطابق جمعہ کی شام سے سیاحتی مقام سونہ مرگ میں تیز ہوائوں اور برفباری کی وجہ سے بجلی کی سپلائی منقطع ہوگئی جس کے بعدپیر کو چوتھے روز بھی محکمہ پی ڈی ڈی سونہ مرگ بجلی کی سپلائی کو بحال کرنے میں ناکام ہوگیا۔ سونہ مرگ کے دکانداروں ،ہوٹل مالکان اور سرکاری دفاتر کے ملازمین نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ چار روز سے سونہ مرگ میں بجلی کی عدم دستیابی سے وہ پریشان ہیں ۔ہوٹل مالکان نے بتایا کہ اگرچہ آج ان کے ہوٹلوں میں سیاح قیام کے لئے آتے ہیں لیکن یہاں بجلی کی عدم دستیابی کی وجہ سے انہوں نے سیاحوں کو کمرے فراہم نہیں کئے ۔انہوں نے بتایا کہ سونہ مرگ میں شدید برفباری کی وجہ سے یہاں شدید سردی ہے اور بجلی کی عدم دستیابی کے باعث سیاحوں کو یہاں قیام کرنے میں مشکلات کا سامنا کرنا پڑے گا ۔دکانداروں نے بتایا کہ چار روز سے بجلی کی عدم دستیابی کو لیکر وہ کئی طرح کے مشکلات کا شکار ہیں۔انہوں نے کہا کہ جب اکتوبر میں معمولی برفباری سے سونہ مرگ میں بجلی کی سپلائی بند ہوگئی  تو موسم سرما کے دوران بجلی کی کیاصورتحال ہوگی۔ اس بارے میں اسسٹنٹ ایگزیکٹیو انجینئر کنگن فاروق احمد رینہ نے کہا کہ ہنگ سونہ مرگ کے مقام پر تیز ہوائوں اور برفباری کی وجہ سے پانچ کھمبے گرگئے ہیںتاہم موسم میں بہتری کے ساتھ ہی کام شروع کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ پیر کی شام تک اگر کھمبے ٹھیک کرنے کا کام مکمل ہو گیا تو بجلی کی سپلائی کو بحال کیا جائے گا ۔