سول سیکریٹریٹ ملازمین کو نئے شناختی کارڈ فراہم ہونگے

سرینگر// انتظامیہ نے سیول سیکریٹریٹ میں تعینات ملازمین کو نئے قسم کے شناختی کارڈ جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے جبکہ ا یس ایس پی سیکورٹی سیول سیکریٹریٹ کو تمام محکموں کے نوڈل افسراں سے درخواستیں اور معلومات طلب کرنے کی ہدایت دی گئی ہے۔ سرکاری حکم نامہ میں محکموں کو ہدایت دی گئی ہے کہ وہ اس سلسلے میں نوڈل آفیسر نامزد کریں جو ایڈیشنل سیکریٹری کے عہدے سے کم نہیں ہو ، جبکہ وہ اپنے محکموں میں کام کرنے والے ملازمین کی ضروری تفصیلات حالیہ پاسپورٹ سائز تصویر و فارمیٹ کے ساتھ سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (سیکورٹی) ، سول سیکریٹریٹ ، سرینگر کو دیں گے۔ آرڈر میں کہا گیا کہ سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (سیکورٹی) صرف متعلقہ نوڈل آفیسر سے درخواستیں طلب کریں گے ، جو اس طرح کی تفصیلات مناسب احتیاط کے ساتھ آگے بڑھائیں گے۔ محکمہ عمومی انتظامی کے کمشنر سیکریٹری کی جانب سے بدھ کو جاری حکم نامہ میں کہا گیا’’ مختلف محکموں میں منسلک عملے کی تفصیلات علیحدہ علیحدہ پیش کی جائیں گی جس کے حوالے سے ماضی کی روایت کے مطابق 6 ماہ کے لیے عارضی کاغذ پر مبنی شناختی کارڈ جاری کیا جائے گا۔‘‘ آرڈر میں کہا گیا کہ اس حوالے سے محکمہ انفارمیشن ٹیکنالوجی ’’کیو آر کوڈ ‘‘کے ساتھ ضروری سافٹ وئیر حل فراہم کرے گا اور اپنے ایک ملازم کو فوری طور پر نئے قسم کے شناختی کارڈ جاری کرنے کے مقصد سے تعینات کرے گا۔ سرکار ی حکم نامے میں تاکید کی گئی ہے کہ تمام ملازمین تبدیلی یا سبکدوشی  کے بعد اپنے شناختی کارڈ ایس ایس پی (سیکورٹی) ، سول سیکرٹریٹ کے پاس لازمی طور پر جمع کرائیں گے۔ اس سلسلے میں ایل پی سی اور پنشن کیسوں کی پیروی کرنے کیلئے پیشگی میں ہی ایس ایس پی (سیکورٹی) ، سول سیکرٹریٹ کی’این او سی‘  اجرائی سے مشروط ہوگی۔ آرڈر میں مزید کہا گیا ہے’’شناختی کارڈ کے ضائع ہونے کی صورت میں ، کسی بھی ملازم کو ایک بار شناختی کارڈ جاری ہونے کے بعد ، ایک نیا کارڈ صرف5001روپے سرکاری خزانے میں جمع کرانے اور پولیس رپورٹ کی تیاری کے بعد جاری کیا جائے گا۔ معلومات میں ملازم کا نام،سول  سیکریٹریٹ میں تعیناتی کی نوعیت،سیکرٹریٹ (مستقل منسلک)،شعبہ.،عہدہ،رہائشی پتہ.،فون جے موبائل نمبر،گاڑی نمبر (اگر کوئی ہے) کی تفصیلات فراہم کرنا لازمی ہے۔ حکم نامہ میں مزید کہا گیا کہ شناختی کارڈ سینئر سپرنٹنڈنٹ آف پولیس (سیکورٹی) ، سول سیکرٹریٹ جاری کرے گا جو اس مقصد کے لیے رقومات کی طلب محکمہ عمومی انتظامی کو پیش کرے گا۔