سلونیاں علاقہ میں بجلی کی تر سیلی لائنیں درختوں سے آویزان | خستہ حال نظام صارفین کیلئے خطرہ ،پختہ کھمبے نصب کرنے کا مطالبہ

منڈی//ضلع پونچھ کی تحصیل منڈی کی پنچایت سلونیاں بی میں محکمہ بجلی کی جانب سے بجلی کے کھمبے نصب نہیں کئے گئے ہیں اور بجلی کی ترسیلی لائنیں درختوں سے ہو کر گزرتی ہے جس کی وجہ سے بجلی کی ترسیلی لائنیں کا کسی بھی وقت گر کر انسانی جانوں کیلئے خطرے کا سبب بن سکتی ہیں ۔اس ترقی یافتہ دور میں سرکار کی جانب سے جہاں جموں و کشمیر کے بجلی نظام کی نجکاری اور بہتر کرنے کے منصوبے بنائے جا رہے ہیں وہیں پر ضلع پونچھ کے دور دراز علاقوں میں محکمہ بجلی تر سیلی لائنوں کیلئے کھمبے نصب کرنے میں پوری طرح سے ناکام رہا ہے ۔اس ترقی یافتہ دور میں بھی بجلی کی ترسیلی لاینیں درختوں اورلکڑی کے کھمبوں کی مدد سے ہی گھروں تک پہنچتی ہیں ۔منڈی تحصیل کے سلونیاں علاقہ کی پنچایت بی میں بھی یہی حال ہے جہاں کی عوام نے انتظامیہ سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ ان کی پنچایت میں بجلی کے پول نصب کئے جائیں تاکہ بجلی کی ترسیلی لائیں ان پختہ کھمبوں کی مددلوگوں کے گھروں تک پہنچیں ۔محمد شفیع نامی ایک شہری نے بتایا کہ درختوں پر بجلی کی ترسیلی لاینیں آویزان رہتی ہیں جس کی وجہ سے لوگوں اور مال مویشیوں کی زندگی کو خطرہ لاحق رہتا ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ سرکار عوام کو بہتر سہولیات پہنچانے کے دعوے کرتے ہیں اور عوام کو ہر ماہ بجلی کے بل روانہ کئے جاتے ہیں مگر زمینی سطح پر عوام کو بہتر بجلی نہیں ملتی اور نہ ہی ان کے علاقے کا بجلی نظام بہتر ہے۔صارفین نے مانگ کرتے ہوئے کہاکہ گائوں میں بجلی کی بہتری کیلئے عملی بنیادوں پر اقدامات اٹھائے جائیں ۔