سری نگر میں عوامی نیشنل کانفرنس کا کئی امور پر احتجاج

سری نگر// عوامی نیشنل کانفرنس نے جمعرات کے روز دفعہ370 کی تنسیخ،حد بندی کمیشن رپورٹ اور دیگر امور پر جمعرات کو یہاں احتجاج درج کیا۔احتجاجیوں نے ہاتھوں میں پلے کارڈس اٹھا رکھے تھے اور وہ نعرہ بازی بھی کر رہے تھے۔
 
اس موقع پر عوامی نیشنل کانفرنس کے سینئر نائب صدر مظفر شاہ نے میڈیا کے ساتھ بات کرتے ہوئے کہا کہ جس طریقے سے یہاں نظام چلایا جا رہا ہے وہ لوگوں کو منظور نہیں ہے۔
 
انہوں نے کہا کہ ہم دفعہ370 کی تنیسخ، حد بندی کمیشن کی رپورٹ، نوجوانوں کی پکڑ دھکڑ وغیرہ کے خلاف آج احتجاج کر رہے ہیں۔
 
ان کا کہنا تھا کہ رئیل اسٹیٹ کے تحت جو ہماری زمین کو بیچا جا رہا ہے وہ ہمیں منظور نہیں ہے۔مسٹر شاہ نے کہا کہ جموں وکشمیر میں بے روزگاری کا گراف کافی بڑھ گیا ہے۔
 
انہوں نے کہا کہ قانون سازیہ اور عوامی حکومت کی عدم موجودگی میں بیوروکریٹس کو زمین بیچنے کی اجازت نہیں دی جائے گا۔
 
ان کا کہنا تھا کہ جموں وکشمیر کے لوگوں کو اپنے حقوق حاصل کرنے کے لئے ایک ہی پلیٹ فارم پر جمع ہونا ہوگا۔
 
انہوں نے کہا کہ جو نوجوان گرفتار کئے گئے ہیں انہیں بشمول ارسلان فیروزکے رہا کیا جانا چاہئے۔