سرکاری سکولوں میں ہوئی چوری کی الگ الگ وارداتیں

ڈوڈہ //گندوہ پولیس نے سرکاری اسکولوں سے لاکھوں روپے کی مالیت کا سامان چوری کرنے والے گروہ کو بے نقاب کرکے دو افراد کو گرفتار  کرکے چوری کی گئی املاک کو بھی برآمد کیا ہے۔تفصیلات کے مطابق پرنسپل گورنمنٹ ہائر سیکنڈری سکول گواڑی کی طرف سے درج کرائی گئی تحریری شکایت کی بنیاد پر نامعلوم افراد کے خلاف تھانہ پولیس گندوہ میں ایف آئی آر زیر نمبر 05/2022 U/S 457/380 IPC درج کیا گیا تھا۔  چوروں کی گرفتاری اور مال کی بازیابی کے لئے ایک خصوصی پولیس ٹیم تشکیل دی گئی۔کیس کی تفتیش کے دوران تشکیل دی گئی ٹیم نے چوروں کی تلاش اور مسروقہ سامان کی برآمدگی کے لیے متعدد مشتبہ مقامات پر چھاپے مارے۔ان کوششوں کے دوران پولیس نے دو افراد عشرت علی ولد نور محمد ملک اور منیر احمد وانی ولد عبدالرشید سکنہ ہلور گندوہ کو پکڑ کر گرفتار کرنے میں کامیابی حاصل کی اور ان کے انکشاف پر سکول کا مسروقہ سامان برآمد کر لیا گیا۔برآمد ہونے والے سامان میں 6×3 ڈائمینشن کی تین سولر پلیٹیں، تین اسکرین ایسر، 150 ایم پی صلاحیت کی دو انورٹر بیٹریاں، باس ٹیوب کے ساتھ ایک اسپیکر، ایک ویب کیمرہ، ایک کیتلی، ایک اولر کنورٹر، ایک یو پی ایس کمپیوٹر، دو سی پی یوز، تین کی پیڈز شامل ہیں۔ اور دو کمپیوٹر ماؤس جس کی لاگت لاکھوں میں ہے۔پولیس کا کہنا ہے کہ کیس کی تفتیش جاری ہے اور ملزمان سے مزید چوری کی برآمدگی کی توقع ہے۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ مذکورہ ملزمان نے مڈل سکول ڈوڈواڑ گندوہ میں ہونے والی چوری کا اعتراف بھی کیا ہے جس پر ایف آئی آر نمبر 80/2019 U/S 457/380 RPC پی ایس گندوہ میں درج کر کے مسروقہ سامان برآمد کر لیا گیا ہے۔ادھر سیول سوسائٹی نے چوری کی واردات کو تیزی سے حل کرنے اور لاکھوں مالیت کا  سامان برآمد کرنے پر پولیس کی کاوشوں کو سراہا ہے ۔