سرنکوٹ کے سنئی بیلہ پل کی تعمیر میں تاخیر | دریائے سرن میں پانی کے بہائو میں اضافہ ، عبور و مرور مشکل

سرنکوٹ// سرنکوٹ سنئی بیلہ میں زیر تعمیر موٹریپل کی تعمیر میں تاخیر کی وجہ سے مکینوں کو دریا عبور کرنے میں شدید مشکلات درپیش ہیں ۔خطہ میں ہوئی شدید بارش کی وجہ سے دریائے سرن میں پانی کا بہار تیز ہونے کیساتھ ساتھ پانی میں اضافہ بھی ہو گیا ہے جس کی وجہ سے ملحقہ علاقوں کے لوگوں کو دریا عبور کرنے میں شدید مشکلات پیش آرہی ہیں ۔معززین نے بتایا کہ عا م لوگوں نے انتظامیہ کے رویہ سے تنگ آکر لکڑی کا عارضی پل نصب کیا ہے جس کی مدد سے وہ اپنی جان جوکھم میں ڈال کر دریا عبور کرنے کرنے پر مجبور ہیں ۔انہوں نے بتایا کہ لکڑی کا عارضی ڈھانچہ سکولوں بچوں کیساتھ ساتھ بزرگوں و مریضوں کیلئے شدید مشکلات کا باعث بن گیا ہے ۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ مذکورہ مقام پر تعمیر پل 2014میں آئے سیلاب کی وجہ سے تباہ ہو گیا تھا لیکن گزشتہ کئی برسوں کی مسلسل جدوجہد کے بعد بھی تعمیر مکمل نہیں کی گئی جس کی وجہ سے لوگوں کی مشکلات جوں کی توں ہی ہیں ۔غور طلب ہے کہ آٹھ برسوں سے پل مکمل نہ ہونے کی وجہ سے ملحقہ دیہات کی ایک وسیع آبادی کو روزانہ دریا عبور کرنے میں کئی طرح کے مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔مکینوں نے بتایا کہ دو ماہ قبل موٹر وے پل کی تعمیر کا عمل محکمہ پی ڈبلیو ڈی کی جانب سے شروع کیا گیا تھا تاہم ساز و سامان کی قلت کی وجہ سے مذکورہ تعمیر پائیہ تکمیل تک نہیں پہنچ سکا ۔مقامی لوگوں نے ضلع ترقیاتی کمشنر سے اپیل کرتے ہوئے کہاکہ وہ ذاتی طورپر مداخلت کر کے تعمیر ات کو مکمل کروا کر عوام کو سہولیا ت فراہم کی جائیں ۔متعلقہ محکمہ کے اسسٹنٹ انجینئر نے بتایا کہ ساز و سامان کی قلت کی وجہ سے تعمیرمکمل نہیں ہو سکتی جبکہ اس عمل کو جلد ہی مکمل کیا جائے ۔