سرحدی گائوں سریا نوشہرہ میں پانی کی ہاہاکار شدید گرمی میں لوگوں کا جینا دوبھر،سپلائی میں اضافہ کی مانگ

رمیش کیسر

نوشہرہ//نوشہرہ کے سرحدی گاؤں سریا میں لوگوں کو پینے کے پانی کا مسئلہ درپیش ہے۔ لوگوں کا مطالبہ ہے کہ پانی کی سپلائی کو ہموار کیا جائے۔ نوشہرہ کے آخری گاؤں سریا جو کہ بھارت پاکستان لائن آف کنٹرول پر واقع ہے، میں پینے کے پانی کی شدید قلت ہے۔ اس گاؤں میں پانی بالکل بھی نہیں ہے۔لوگوں کا الزام ہے کہ محکمہ جل شکتی ہفتے میں صرف ایک بار پانی فراہم کر رہا ہے جس کی وجہ سے وہ زندہ نہیں رہ پا رہے ہیں۔پانی کی کم فراہمی بھی ایک مسئلہ ہے۔ انہوں نے محکمہ جل شکتی کے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا کہ ہفتے میں دو یا تین بار پینے کا پانی فراہم کیا جائے تاکہ انہیں اس پریشانی سے نجات مل سکے۔اس حوالے سے جب ایگزیکٹیو انجینئر جل شکتی محکمہ نوشہرہ سے رابطہ کیا گیا تو انہوں نے بتایا کہ بارش نہ ہونے سے پانی کی سطح نیچے آگئی ہے جس کی وجہ سے ہفتے میں صرف ایک یا دو بار پانی دیا جا رہا ہے۔