سب ضلع ہسپتال مینڈھر میں ماہر ڈاکٹر کی سامیاں برسوں سے خالی ہسپتال میں انستھیسیا ڈاکٹر دستیاب نہ ماہر امراض اطفال ،مریض مشکلات سے دوچار

جاوید اقبال

مینڈھر/ / سب ضلع ہسپتال مینڈھر میں سپیشلسٹ ڈاکٹروں کی کئی اسامیاں کئی برسوںسے خالی ہیں جس کی وجہ سے لوگوں کو کئی قسم کی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔ لوگوں نے جموں وکشمیر( یو ٹی) انتظامیہ کو تنقید کا نشانہ بنانے ہوئے کہا کہ سب ڈویژن مینڈھر تین بڑی تحصیلوں پرمشتمل ہے جن میں لاکھوں کی آبادی ہے اور سپیشلسٹ ڈاکٹر نہ ہونے کی وجہ سے لوگوں کو راجوری یا پونچھ جانا پڑتا ہے۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ بچوں اور بیہوشکی کا ڈاکٹر نہ ہونے کی وجہ سے لوگوں کو باہر کے ہسپتالوں کا روخ کرنا پڑتا ہے اور لاکھوں روپے باہر کے ہسپتالوں میں جا کر لگانے پڑتے ہیں۔ اُنکا کہنا تھا کہ کئی لوگ بہت غریب ہیں جو دور دراز کے ہسپتالوں میں جا کر علاج نہیں کروا سکتے۔ لوگوں کا کہنا ہے کہ بی ایم او مینڈھر کی کوشش کے باوجود بےہوشی کا ڈاکٹر پونچھ سے صرف ہفتے میں ایک بار آتا ہے جس سے کام نہیں چل سکتا جبکہ بچوں کے ڈاکٹر کی اسامی کئی برسوںسے خالی ہے اور چھوٹے چھوٹے بچوں کے والدین کو کئی قسم کی پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔ لوگوں نے یو ٹی انتظامیہ سے اپیل کی ہے کہ ڈاکٹروں کی خالی پڑی اسامیوں کو پر کیاڈھکی بيهرا بھی b جائے