سب ضلع اسپتال لنگیٹ میں طبی سہولیات کا فقدان | طبی اور نیم طبی عملہ کی 20اسامیا ں خالی،لوگوں کو مشکلات

کپوارہ//سب ضلع اسپتال لنگیٹ میں طبی سہولیات کے فقدان کی وجہ سے لوگوں کو سخت مشکلات کاسامنا ہے جبکہ مذکورہ اسپتال میں طبی اور نیم طبی عملہ کی 20اسامیا ں خالی پڑی ہیں ۔لنگیٹ علاقہ کے مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ کئی سال قبل لنگیٹ اسپتال کا درجہ بڑھا کر ا سے سب ضلع اسپتال کا درجہ دیا گیا لیکن ابھی تک مذکورہ اسپتال میں سب ضلع اسپتال کی سہولیات میسر نہیں ہیں، جس کے نتیجے میں علاقہ کی ایک بڑی آبادی کو علاج و معالجہ کے حوالہ سے سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے چند سال قبل جب پرائمری ہیلتھ سینٹر لنگیٹ کو سب ضلع اسپتال کا درجہ دیا گیا تو لوگ پراُمید ہوئے تھے کہ اب یہا ں کی آ باد ی کو بہتر طبی سہولیات میسر ہوں گی لیکن تا حال اسپتال کے کام کاج میں کوئی بھی تبدیلی نہیں آئی اور ناہی مقامی لوگو ں کو سب ضلع اسپتال کا درجہ بڑھانے سے کوئی فائدہ مل سکا ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ سب ضلع اسپتال لنگیٹ کے لئے ایک نئی عمارت بھی تعمیر کی گئی جس کے بعد مذکورہ اسپتال کو کئی سال قبل نئی عمارت میں منتقل کیا گیا لیکن آبادی کی ایک بڑی تعداد بہتر طبی علاج و معالجہ کے لئے ترس رہی ہے ۔اسپتال میں اس وقت طبی اور نیم طبی عملہ کی 20اسامیا ں  خالی پڑی ہیں ۔مقامی لوگو ں کے مطابق سب ضلع اسپتال لنگیٹ میں ایمبو لنس گا ڑی نہیں ہے جس کی وجہ سے مریضو ں کو کسی دوسرے اسپتال منتقل کرنے کے دوران سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔سب ضلع اسپتال کا درجہ بڑھانے کے بعد اسپتال کے لئے سولہ ڈاکٹر وں کی تقرری کو منظوری دی گئی لیکن ابھی بھی 9ڈاکٹرو ں کی اسامیا ں خالی پڑی ہیں اور محض7ڈاکٹر تعینات کئے گئے ہیں جبکہ ایک سرجن ڈاکٹر کی اسامی کو منظوری دی گئی لیکن یہ پو سٹ بھی تا حال خالی ہے ۔اسپتال میں بی گریڈ سپیشلسٹ ،بی گریڈ ماہر امراض خواتین کی اسامیا ں بھی خالی پڑی ہیں جس کے نتیجے میں حاملہ خواتین کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے اور اکثر و بیشتر اوقات درد ذہ میں مبتلا خواتین کو دیگر اسپتالو ں کو منتقل کیا جاتا ہے ۔اسپتال میں 7میڈیکل آفیسرو ں کی تعیناتی عمل میں لائی گئی جن میں 1پو سٹ ابھی بھی خالی ہے ۔مقامی لوگو ں کے مطابق سب ضلع اسپتال لنگیٹ میں آپریشن تھیٹر کو مکمل کیا گیا ہے اور اس میں سر جری کرنے کے لئے تمام آلات دستیاب ہیں جبکہ طبی اور نیم طبی عملہ کی تعیناتی بھی عمل میں لائی گئی لیکن تا حال آپریشن تھیٹر کو چالو نہیں کیا گیا ہے جس کے با عث مریضوں کو سخت مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔مذکورہ اسپتال میں الٹر اسائو نڈ کر نے کے لئے کسی بھی ریڈیالو جسٹ ڈاکٹر کو تعینات نہیں کیا گیا جبکہ ڈنٹل ڈاکٹر کا پو سٹ بھی خالی پڑا ہے اور نتیجے کے طور الٹر سائونڈ اور دانتو ں کا علاج کرنے کے لئے مریضوں کو دقتو ں کا سامنا کرنا پڑتا ہے ۔اسپتال میں ہیڈ فارمسٹ ،سینئر سپر وائزر لیب ٹیکنیک ،سینئر لیب ٹیکنیشین،سینئر سپر وائزر ،ایکسرے ٹکینیشن کی اسامیا ں بھی خالی پڑی ہیں ۔اسپتال میں 7جونیئر نرسو ں کو تعینات کیا گیا لیکن 2اسامیا ں ابھی بھی خالی پڑی ہیں ۔ہیلتھ ورکر 1چوکیدار اور کلاس فورتھ کی اسامی خالی ہے ۔اسپتال میں 2یونٹ وارڈ بوائزکی اسامیاں بھی خالی ہیں ۔ بلاک میڈیکل آفیسر لنگیٹ ڈاکٹر گوہر کا کہنا ہے کہ انہو ں نے اسپتال کو در پیش مسائل کے حوالہ سے محکمہ صحت کے اعلیٰ حکام کو مطلع کیا ہے جبکہ اسپتال میں آپریشن تھیٹر کو اس لئے چالو نہیں کیا جارہا ہے کیوں کہ اسپتال میں بجلی کی ہاٹ لائن دستیاب نہیں ہے جس کی وجہ سے آپریشن تھیٹرکوقابل کار بنانے میں مشکلات در پیش ہیں ۔انہو ں نے کہا کہ ایمبو لنس گا ڑی نہ ہونے کی صورت میں سب ضلع اسپتال کرالہ گنڈ سے رجو ع کیا گیا اور اس اسپتال کی ایمبو لنس گاڑی استعمال کی جاتی ہے اور ایمر جنسی کی صورت میں 108پر کال کر کے اس کی خدمات حاصل کی جاتی ہے ۔