سبزسونے کے فروغ کیلئے عوامی تعاون لازمی

  سرینگر//گورنرکے مشیر کے۔ وجے کمار نے کل یہاں محکمہ جنگلات اور اس سے وابستہ شعبوں کی کارکردگی کا جائیزہ لیا۔ انہوں نے محکمہ اور سوشل فارسٹری کی طرف سے ریاست میں سبز سونے کے فروغ کئے جارہے اقدامات کا بھی جائیزہ لیا۔میٹنگ میں کمشنر سیکرٹری نے مشیر موصوف کو بتایا کہ جنگلاتی اراضی کو ناجائیز تجاوزات سے بچانے کے لئے باؤنڈری پلرز قائم کئے جارہے ہیں۔ انہوں نے انفورسمنٹ وِنگ کی طرف سے پچھلے چند برسوں کے دوران ضبط کی گئی جنگلاتی پیداوار کے بارے میں بھی جانکاری دی۔مشیر موصوف کو پچھلے دو برسوں کے دوران بڑے پیمانے پر شجرکاری مہم کے بارے میں بھی بریف کیا گیا۔ اس مہم کے دوران محکمہ نے84 لاکھ پودوں کی شجرکاری کی۔مشیر موصوف نے اس مہم کے دوران لگائے گئے پودوں کی دیکھ ریکھ کے لئے مناسب اقدامات اُٹھانے کی ہدایت دی۔ وجے کمار کو بتایا گیا کہ جنگلاتی اراضی کو ناجائیز تجاوزات سے خالی کرانے اور جنگلاتی اراضی کی نشاندہی کے  علاوہ بھنگ کے پودوں کو ختم کرنے کے بھی اقدامات اُٹھائے گئے ہیں۔ میٹنگ میںسٹیٹ کمپنسیٹری ایفارسٹیشن فنڈ منیجمنٹ اینڈ پلاننگ اتھارٹی( کیمپا) کے تحت حاصل کی گئی کامیابیوں کا بھی خلاصہ کیا گیا۔میٹنگ میں بتایا گیا کہ ریاست میں پانچ نیشنل پارک،15 وائلڈ لائف سینچوریز اور34 کنزرویشن ریزروز موجود ہیں۔کمشنر سیکرٹری نے مشیر موصوف کو جمبو اور پہلگام زُو پروجیکٹوں کے قیام کے سلسلے میں جاری اقدامات کے بارے میں بھی جانکاری دی۔مشیر موصوف نے کمشنر سیکرٹری کو دیانتدار اور محنتی افسر وں اور اہلکاروں کی حوصلہ کے لئے انعامات قائم کرنے کی تجویز پیش کی۔