سابق ڈی جی پی دلباغ سنگھ کا دور ۔1000سےزائدملی ٹینٹ ہلاک

 عظمیٰ نیو ز سروس

سرینگر//جموں و کشمیر میں پولیس کے سابق ڈائریکٹر جنرل دلباغ سنگھ کے دور میں 1000 سے زیادہ ملی ٹینٹ مارے گئے جو منگل کو خدمات سے سبکدوش ہوئے۔ یہ بات حکام نے بتائی۔انہوں نے کہا کہ سنگھ، جنہیں سب سے طویل مدت تک جموں و کشمیر کے پولیس سربراہ کے طور پر خدمات انجام دینے کا اعزاز حاصل ہے، نے 7 ستمبر 2018 کو ڈی جی پی کا عہدہ سنبھالا تھا، ایسے وقت میں جب حالات چیلنجوں سے بھرے ہوئے تھے۔

سنگھ کی قیادت میں جموں و کشمیر پولیس نے آرٹیکل 370 کی منسوخی اور جموں و کشمیر کی تنظیم نو سمیت مختلف چیلنجوں کا کامیابی سے سامنا کیا۔”ان کے دور میں، تقریباً 1,055 دہشت گرد مارے گئے، 58 نے ہتھیار ڈال دیے، اور 1,448 دہشت گردوں کے حامیوں کو گرفتار کیا گیا” ۔ اس مدت کے دوران، فورس کو ایک اشوک چکر، تین کیرتی چکر، 13 شوریہ چکر اور 887 پولیس تمغوں سے نوازا گیا۔منشیات کے کاروبار میں ملوث 11,725 افراد کو گرفتار کیا گیا اور 741 کلوگرام ہیروئن سمیت 98,249 کلو گرام نشہ آور اور نفسیاتی مادہ ضبط کیا گیا۔