زرعی یونیورسٹی جموں کے دو سابق وائس چانسلر، کنٹرول، رجسٹرار

جموں//انسداد رشوت ستانی بیورو نے جموں سکاسٹ کے 2سابق وائس چانسلروں، کنٹرولر، رجسٹرارکے علاوہ متعدد افسران کے خلاف بے ضابطگیوں اور غیر قانونی تقرریوں کے الزام میں چارج شیٹ دائر کیا ہے ۔اینٹی کرپشن بیورو (اے سی بی) نے سکاسٹ جموں شیر کشمیر یونیورسٹی آف ایگریکلچر اینڈ ٹیکنالوجی کے 2سابق وائس چانسلروں ، کنٹرولر ، رجسٹرار اور ڈپٹی رجسٹرار کے خلاف غیر قانونی طریقے سے تقرری عمل میں لانے کے الزام میں اینٹی کورپشن کورٹ میں چارج شیٹ دائر کیا ہے ۔ معلوم ہوا ہے ملزمات میں سابق وائس چانسلر جس نے خود ہی استفادہ حاصل کرنے والے کے خلاف کورٹ میں شکایت درج کی تھی نے ہی سینئر سکیل میں ملزم کی تقرری عمل میں لائی ہے ۔ اس سلسلے عدالت کی جانب سے تحقیقات کے حوالے سے احکامات کے بعد اینٹی کورپشن بیورو نے نئے سرے سے تحقیقاتی عمل شروع کرنے کے بعد اس کیس میں چارج شیٹ دائر کی ۔ اے سی بی کی جانب کرپشن ، بے ضابطگیوں اور غیر قانونی طریقے سے تعیناتی عمل میں لانے کے الزام میں جن ملزمان کے خلاف چالان پیش کیا گیا ہے ان میں سنجے شرماء، ڈپٹی رجسٹرار، ہشمت اللہ خان، سابق وائس چانسلر سکاسٹ جموں ، ناگیندر شرما سابق وائس چانسلر ، رمیش کمار شرما ءسابق رجسٹرار، راکیش موہن بھگت ، سابق ڈائریکٹر ریذیڈنٹ انسٹریکشن ، وجے کمار سوئی سابق کنمپٹرولر اور اشوک کمار کول سابق ڈپٹی رجسٹرار سکاسٹ جموں شامل ہیں۔ ملزمان کے خلاف ایف آئی آر زیر نمبر 2/2016درج کیا گیا تھا اور یہ شکایت اُس وقت کے وائس چانسلر ناگیندر شرما نے ہی درج کروائی تھی ۔ اس کے بعد یہ معاملہ اینٹی کرپشن سپیشل جج جموں کو منتقل کیا گیا تھا جنہوںنے اس معاملے کی نئے سرے سے تحقیقات کے احکامات صادر کئے تھے ۔