ریڈونی میں نئے فورسزکیمپ کا قیام

کولگام//تحصیل کیموہ کے مضافات ریڈونی میں گزشتہ دنوں ایک نئے فورسزکیمپ کو قائم کرنے کیخلاف کھڈونی کیموہ میں دوسرے روز بھی مکمل ہڑتال رہی جس دوران قصبے کی تمام دوکانیں بند رہیںجبکہ سڑکوں پر گاڑیوں کی آمدورفت بھی بند رہی۔ تفصیلات کے مطابق تحصیل کیموہ کے مضافات ریڈونی بالا میں گزشتہ دنوں ایک نیا فوجی کیمپ قائم کرنے کے خلاف اور اس کیمپ کو وہاں سے ہٹانے کے مطالبے کو لیکر تحصیل کیموہ کے اکثر علاقوں میں دوسرے روز بھی مکمل ہڑتال رہی، جس دوران قصبے اور اسکے گردنواح کے علاقوںمیں قائم تمام تجاری مراکز دکانیں اور تعلیمی ادارے بند رہیں۔ اگر چہ صبح کے وقت کچھ مسافر و نجی گاڑیاں قصبے کے وسط سے گذر رہی تھی مگر دوپہر تقریباََ بارہ بجے نوجوانوں نے قصبے کے مختلف مقامات پر سڑکوںپر رکاوٹیں کھڑی کیں۔ اس موقع پر مقامی نوجوانوں کی طرف سے ہڑتال کی خلاف ورزی کرنے والے گاڑیوں کو واپس جانے کیلئے کہا گیا جبکہ قصبے کے وسط سے گذر رہی فوجی گاڑیوں کو شدید پتھراو کا نشانہ بنایا گیا ،یہ سلسلہ تقریباََ شام تک جاری تھا۔ اس صورتحال کے نتیجے میں انت ناگ اور کولگام شوپیان اضلاع کو ملانے والی سڑک پر مسلسل دوسرے روز بھی ٹریفک مکمل طور پر بند رہا، جس کی وجہ سے مسافروں کو منزل تک پہنچے کیلئے دوسرے  متبادل راستوں کو اختیا ر کرنا پڑا۔