ریلوے ٹنل میں بلاسٹنگ سے بنکوٹ کے درجنوں رہائشی مکان نقصانات سے دوچار

بانہال// پیر کی شام پونے آٹھ بجے بانہال کے نزدیک بنکوٹ علاقے میں زیر تعمیر ریلوے ٹنل نمبر 77 ڈی کے اندر کی گئی بلاسٹنگ کی وجہ سے پنچایت بنکوٹ کے چھاناڑ علاقے میں درجنوں رہائشی مکانوں کو نقصان پہنچا ہے اور مکانوں میں تازہ دراڑیں پڑ گئی ہیں۔ یہ ریلوے ٹنل بانہال میں زیر تعمیر ہے اور یہ کشمیر ریل پروجیکٹ پر 110 کلومیٹر لمبی بانہال۔ کٹرہ ریلوے لائین کا حصہ ہے۔ پیرکی شام کی گئی اس بھاری بلاسٹنگ کے فوراً بعد  جہاں متاثرہ علاقہ میں خوف و دہشت کی لہر دوڑ گئی اور لوگ گھروں سے باہر نکل ائے  وہیں لوگوں کی ایک بڑی تعداد  نے پیر کی شام ہی  زیر تعمیر ریلوے ٹنل نمبر 77 کے باہر احتجاجی مظاہرے کئے اور ٹنل کے اندر اور باہر جاری تعمیراتی کام کو روک دیا۔ لوگوں کا مطالبہ تھا کہ رہائشی مکانوں کو ٹنلوں کی تعمیر سے پہنچے نقصانات کا جائزہ لیا جائے اور متاثرین کو فوری طور معاوضہ ادا کیا جائے۔ احتجاج کررہے لوگوں کا الزام ہے کہ ریلوے ٹنل تعمیراتی کمپنی ABCI کی طرف سے ریلوے ٹنل کے اندر غیر قانونی طور سے مسلسل بھاری بارودی دھماکے کئے جارہے ہیں اور پیر کی شام کئے گئے ایسے ہی زور دار بلاسٹنگ کی وجہ سے درجنوں رہائشی مکانوں کو نقصانات سے دوچار ہونا پڑا  ہے اور پہلے ہی بنکوٹ گاوں کے ایک سو سے زائید متاثرین معاوضہ کے بغیر ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اگرچہ ارکان انٹرنینشل کی طرف سے شام پانچ بجے بعد ٹنلوں کے اندر بلاسٹنگ پر مکمل پابندی عائید ہے لیکن ٹنل تعمیراتی کمپنی اے بی سی ائی ان احکامات کو بالائے طاق رکھکر اور لوگوں کو کوئی پیشگی اطلاع دیئے بغیر ہی غلط اوقات میں بلاسٹنگ کی مرتکب پائی گئی ہے۔ منگل کی صبح ٹنل بلاسٹنگ کی وجہ سے رہائشی مکانوں کو پہنچے نقصانات کا جائزہ لینے کیلئے  تحصیلدار بانہال شیخ جاوید احمد ،  ایس ایچ او بانہال نعیم الحق نے IRCON انٹرنیشنل کے ڈی جی ایم اوتار کرشن اور سوامی ناتھن  ، شمالی ریلوے کے ایگزیکٹیو انجئینر  راکیش کمار ، ٹنل تعمیراتی کمپنی ABCI کے پروجیکٹ منیجر ندیم شمس اور مقامی سرپنچ محمد الیاس وانی کے ہمراہ علاقے کا دورہ کیا اور گھر گھر جاکر نقصانات کا جائزہ لیا  اور نقصانات کی ابتدائی کاروائی کو انجام دیا گیا۔ اس موقع پر IRCON انٹرنیشنل کے اسسٹنٹ جرنل منیجر سوامی ناتھن نے بات کرنے پر کشمیر عظمی کو بتایا کہ ان کی ٹیم نے نقصانات کا جائزہ لینے کیلئے پنچایت بنکوٹ کے چھاناڑ کا دورہ کیا اور رہاشئی مکانوں کو پہنچے نقصانات کا تخمینہ لگانے کیلئے پہلے ہی ڈپٹی کمشنر رامبن مسرت الاسلام کی طرف سے تشکیل دی گئی تخمینہ کمیٹی جلد ہی علاقے کا دورہ کرے گی۔ انہوں نے اعتراف کیا ہے کہ کچھ مکانوں کو پیر کی شام ریلوے ٹنل کے اندر کی گئی بلاسٹنگ سے نقصان پہنچا ہے اور تشکیل دی گئی ٹیم نقصانات کا تخمینہ تیار کرکے رپورٹ پیش کرے گی۔ اس کے بعد  تحصیلدار بانہال شیخ جاوید احمد  نے ٹنل بلاسٹنگ کے چھاناڑ متاثرین کو یقین دلایا کہ  نقصانات کا تخمینہ لگانے کے بعد معاوضہ کی فائلیں تیار کی جائیں گی اور لوگوں کے ساتھ بھرپور انصاف کیا جائے۔ اس یقین دھانی کے بعد احتجاجی متاثرین نے قریب اٹھارہ گھنٹوں سے بند ریلوے ٹنل کا تعمیراتی کام منگل دوپہر بعد دوبارہ شروع کرنے کی اجازت دی اور ٹنل کے اندر اور باہر تعمیراتی کام کو معمول کے مطابق شروع کیا گیا۔