ریاست کے موجودہ حالات پر مصطفی کمال کوتشویش

سرینگر//ریاست کے موجودہ حالات پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے نیشنل کانفرنس کے معاون جنرل سیکریٹری ڈاکٹر شیخ مصطفیٰ کمال نے کہا کہ ان حالات کی ذمہ دار سابقہ پی ڈی پی بھاجپا اتحاد حکومت ہے ۔ایک بیان کے مطابق انہوں نے الزام لگایاکہ ریاست کو ہر سطح پر تباہی کے دھانے لانے کیلئے بھی قلم دوات والے ہیں، جنہوںنے بی جے پی کیلئے ریاست میں قدم جمانے کی راہ ہموار کر دی ۔ ریاست کی اقتصادی بد حالی اور معاشی بدحالی کے لئے بھی یہی قلم دوات والے ذمہ دار ہے جنہوں نے ریاست پر جی ایس ٹی لگا کر ناگپور کے آقاؤں کو خوش کرنے کے لئے اقتدار میں رہنے کے لئے گلے لگایا ۔ڈاکٹر مصطفی کمال نے الزام لگایاکہ ریاست میں نوجوانوں کی نسل کشی اور ریاست کے لوگوں کو تقسیم کرنے کے لئے بھی پی ڈی پی جماعت ذمہ دار ہے کیونکہ مرحوم مفتی محمد سعید نے اپنی حیاتی میں بحثیت مرکزی وزیرداخلہ کے ریاست میں فوج کو بے حد اختیارات یعنی افسپا سے لیس کر کے کشمیر کے کونے کونے میں قتل وغارت کا بازار گرم کروایا اور آج بھی اہل کشمیر پوری طرح ماتم کدہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ پی ڈی پی نے عوام سے مذہب کے نام پر ووٹ حاصل کئے اور لوگوں کو بتایا کہ پی ڈی پی ،بی جے پی کوریاست میں داخل ہونے نہیں دینے کی طاقت رکھتی ہے ،لیکن بعد میں اسی جماعت کے ساتھ اتحاد کیا۔انہوں نے کہا یہ نیشنل کانفرنس کے عمر عبداللہ ہی ہیں جنہوں نے ریاستی اسمبلی میں جراء ت کے ساتھ دفعہ35Aاوردفعہ 370کے دفاع کیلئے ریاست کے تینوں خطوں کے لوگوں کو بیدار کیا۔