ریاست کے جنگلات میں پر اسرار آتشزنیاں

 جموں //گزشتہ 2 برسوں میں وادی کے جنگلات آتشزدگی سے محفوظ نہیں رہے ہیں۔ سرکار نے اعتراف کیا ہے کہ پچھلے دو برسوں کے دورا ن وادی کے جنگلات میں آگ کی 120وارداتیں رونما ہوئیں جبکہ جموں خطے میں پچھلے دو برسو ں کے دوران آگ کی کسی بڑی واردات کی رپورٹ درج نہیں ہوئی ۔ قانون ساز اسمبلی میں ممبر اسمبلی عیدگاہ مبارک گل کے ایک سوال کے جواب میں جنگلات وماحولیات کے وزیر چودھری لال سنگھ نے بتایا  ہے کہ وادی کے جنگلات میں گذشتہ 2برسوں کے دوران آتشزدگی کی 120وارداتیں رونما ہوئی ہیں ۔انہوں نے ا عدادوشمار پیش کرتے ہوئے کہا کہ 2016کے مقابلے میں سال 2017میں وادی کے جنگلات میں آگ کی وارداتوں میں اضافہ ہوا۔سال2015.16میں 49اور سال2016.17میں 71آگ کی وارداتیں رونما ہوئیں ۔تحریری جواب میں انہوں نے مزید بتایا کہ سال2015.16میں وسطی کشمیر کے جنگلات میں 18،شمالی کشمیر کے جنگلات میں 24،جنوبی کشمیر کے جنگلات میں 5اور شوپیاں کے جنگلات میں آگ کی 2 وارداتیں رونما ہوئی ہیں۔مالی سال 2016.17میں وسطی کشمیر کے جنگلات میں 16،شمالی کشمیر میں 25،جنوبی کشمیر میں 13 اورشوپیاں میں 16 آگ کی وارداتیں رونما ہوئی ہیں ۔تاہم جموں خطے میں پچھلے دو برسو ں کے دوران آگ کی کسی بڑی واردات کی رپورٹ درج نہیں ہوئی ہے ۔