راجوری کے گدیوگ علاقے میں مسجد کی توڑ پھوڑ

 راجوری// ضلع راجوری کے خواس گدیوگ میں 18مئی دوان شب ایک مسجد کی توڑ پھوڑ کرنے کا واقعہ سامنے آیاہے جس پرپولیس نے اگر چہ کیس درج کیا ہے تاہم اب تک کوئی بھی گرفتار ی عمل میں نہیں لائی گئی ۔ اس واقعہ کی مذمت کرتے ہوئے مجلس اتحادالمسلمین اور تحریک غلامان مصطفی نے معاملے کی تحقیقات کرکے ملوثین کے خلاف کارروائی کی مانگ کی ہے۔وہیں علماء کرام نے امن و بھائی چارے کی اپیل کرتے ہوئے کہاہے کہ پولیس کی کاروائی کا انتظار کیاجائے ۔ انہوں نے کہا کہ معاملے کی نوعیت کو دیکھتے ہوئے صبر وتحمل سے کام لیا جائے تاکہ شرپسند عناصر اپنے منصوبے میں ناکام ہوسکیں ۔انجمن اہل سنت والجماعت ضلع صدر فاروق نعیمی نے کہا کہ اگر پولیس شرپسند عناصر کے خلاف کارروائی کرنے میں ناکام ثابت ہوئی اس کے منفی نتائج سامنے آسکتے ہیں اس لئے فوری طور پر کارروائی کی جائے اور یہ پتہ کیاجائے کہ کون لوگ اس میں ملوث ہیں۔ اس حوالے سے بات کرتے ہوئے ایس ایس پی راجوری نے کہا کہ پولیس نے کیس درج کیا ہے اور کارروائی کی جارہی ہے ۔