راجوری میں مسافر بس لڑھک گئی

 ترال+نوشہرہ//ترال اور نوشہرہ راجوری میں حادثات کے دوران2افراد لقمہ اجل جبکہ56دیگر زخمی ہوئے ۔ مین بازار ترال میں سوموار کی صبح تراگ چڑھائی کے نزدیک ایک تیز رفتار موٹر سائیکل زیر نمبر JK01AF/0274 ایک ایل پی گاڑی زیر نمبر JK13A/5568 کے ساتھ ٹکرا یا جس کے نتیجے میںایک20سالہ نوجوان شارک احمد نائیکو اسد اللہ نائیک ساکن امیر آباد شدید زطورخمی ہواجو سرینگرمیںزخموں کی تاب نہ لا کر دم توڑ بیٹھا ۔جب نوجوان کی لاش اس کے آبائی گائوں لائی گئی تو وہاں کہرام مچ گیا۔مزکورہ نوجوان کا والد اسد اللہ نائیک قریب20روز قبل انتقال کر گیاہے ۔ ادھرنوشہرہ کے لام علاقہ میں سڑک حادثے میں 1 مسافر کی موت  جبکہ 56دیگر مسافر زخمی ہو گئے ۔پولیس نے بتایا کہ یہ حادثہ اس وقت پیش آیا جب یہ کنٹر بس لام پکھرنی سے نوشہرہ تک سفر کررہی تھی ۔پولیس نے بتایا ’’قلعہ درہال کے قریب دیوتیا کے مقام پر بس تیز رفتاری کی وجہ سے ڈرائیور کے قابو سے با ہر ہو کر گہری کھائی میں جا گری جس کی وجہ سے ایک معمر شخص جس کی شناخت لال حسین ولد غلام علی کے طور ہوئی ہے موقع پر ہی جاں بحق ہو گئے جبکہ دیگر 56مسافر زخمی ہو گئے جنہیں ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نوشہرہ سکھدیو سنگھ سمبیال نے بتایا کہ حادثے کی اطلاع ملتے ہی لام پولیس چوکی کی پولیس ٹیموں کے ساتھ ایک بڑا ریسکیو آپریشن شروع کیا گیا اور لام آر آر کیمپ سے فوج کی ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں جبکہ عام لوگوں و سیکورٹی اہلکاروںکی مدد سے متاثرین کو نکالنا شروع کیا۔ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر نے بتایا کہ ’’حادثے میں کل 56 افراد زخمی ہوئے جنہیں سب ڈسٹرکٹ ہسپتال نوشہرہ لایا گیا جہاں ان سب کو ہسپتال میں داخل کرایا گیا۔