دہلی میں شدید گرمی لوگ پریشان، اورینج الرٹ جاری

 یو این آئی

نئی دہلی// قومی راجدھانی دہلی اور اس کے آس پاس کے علاقوں کے باشندے چلچلاتی گرمی اور گرم لہر سے پریشان ہیں۔ محکمہ موسمیات نے دارالحکومت میں اورنج الرٹ جاری کر دیا ہے۔ دہلی کے علاوہ اتر پردیش، ہریانہ، راجستھان اور پنجاب میں بھی گرمی کی وجہ سے لوگوں کا برا حال ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق 13 سے 19 جون تک دہلی والوں کو شدید گرمی اور گرم لہر کا سامنا کرنا پڑے گا۔ ابھی بارش کا کوئی نام و نشان نہیں ہے۔ اگرچہ آج دہلی میں جزوی طور پر ابر آلود رہا، لیکن گرمی کی لہر بدستور جاری رہی اور 25 سے 35 کلومیٹر فی گھنٹہ کی رفتار سے گرم ہوائیں چلیں گی۔محکمہ موسمیات کے مطابق آنے والے دنوں میں راجدھانی کے کئی حصوں میں گرم لہر کے ساتھ ساتھ مشرقی اتر پردیش کے جنوبی حصے میں کچھ مقامات پر شدید گرمی کی لہر پیدا ہو سکتی ہے۔ محکمہ نے کہا کہ جنوبی بہار، پنجاب، ہریانہ، جھارکھنڈ، چھتیس گڑھ اور شمال مشرقی مدھیہ پردیش میں بھی گرمی کی لہر برقرار رہے گی۔دارالحکومت میں زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 45 اور کم سے کم 29 ڈگری سیلسیس ریکارڈ کیا گیا۔ محکمہ موسمیات کے مطابق دہلی کے صفدرجنگ علاقے میں زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 44.7اور کم سے کم درجہ حرارت 29.4ڈگری سیلسیس ریکارڈ کیا گیا۔ دہلی میں سب سے زیادہ درجہ حرارت نجف گڑھ میں ریکارڈ کیا گیا جہاں زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 47.7 اور کم سے کم درجہ حرارت 33.1ڈگری سیلسیس تھا۔ اس کے علاوہ ظفر پور میں زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 46.3 ڈگری سیلسیس، آیا نگر میں 45.9، لودھی روڈ میں 46.1، نریلا میں 47.5، پالم میں 45.5 اور راج گھاٹ میں44.5 ڈگری سیلسیس ریکارڈ کیا گیا۔مرکزی آلودگی اور کنٹرول بورڈ سی پی سی بی کے مطابق دارالحکومت دہلی میں آج صبح 7 بجے تک دہلی کی ہوا کے معیار کا اوسط انڈیکس 195 پوائنٹس ہے۔ دہلی-این سی آر شہروں میں فرید آباد 205، گروگرام 202، غازی آباد 198، گریٹر نوئیڈا 276 اور نوئیڈا 215 ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق جہاں ایک طرف جنوبی ہندوستان کی ریاستوں میں موسلا دھار بارش سے لوگوں کو گرمی سے راحت ملی ہے وہیں دوسری جانب شمالی ہندوستان کی ریاستوں میں لوگ گرمی سے کافی پریشان ہیں۔ تاہم مہاراشٹر اور کیرالہ میں مانسون پہنچ چکا ہے اور دہلی کو انتظار کرنا پڑے گا۔