دفعہ 370منسوخی کے بعد

نئی دہلی//جموں و کشمیر انتظامیہ نے 5 اگست 2019 کے بعد سے تقریباً 1,700 کشمیری پنڈتوں کو مختلف سرکاری محکموں میں تعینات کیا  ہے جب آرٹیکل 370 کو منسوخ کیا گیا تھا اور سابقہ ریاست کو مرکز کے زیر انتظام علاقوں میں تقسیم کیا گیا تھا،  بدھ کوراجیہ سبھا کو اس بارے میںمطلع کیا گیا۔مرکزی وزیر مملکت برائے داخلہ نتیانند رائے نے کہا کہ جموں و کشمیر کی حکومت کے فراہم کردہ اعداد و شمار کے مطابق، 44,684 کشمیری تارکین وطن خاندانوں کو دفتر ریلیف اینڈ ری ہیبلیٹیشن کمشنر (مہاجر) جموں میں رجسٹر کیا گیا ہے، جن میں 1,54,712 افراد شامل ہیں۔انہوں نے ایک تحریری سوال کا جواب دیتے ہوئے کہا ’’کشمیری مہاجر خاندانوں کی بحالی کیلئے، جموں و کشمیر کی حکومت نے 5 اگست 2019 سے اب تک ایسے 1,697 افراد کو  ملازمتیں فراہم کی ہیں اور اس سلسلے میں مزید 1,140 افراد کا انتخاب کیا ہے۔‘‘