دفاتر میں ا ی۔آفس منتقلی کی ڈیڈ لائن مقرر

سرینگر//جموں و کشمیر حکومت نے سبھی سرکاری دفاتر میں ای ۔آفس پر منتقلی کے لئے ڈیڈ لائن کے احکامات صادر کئے ہیں۔ جمعرات کو تمام انتظامی سیکریٹریوں سے کہا گیا ہے کہ وہ اپنے ماتحت کام کرنے والے محکموں کے سرابرہان کو ہدایت دیں کہ وہ سبھی دفتری کام کاج کو فوری طور ’ای۔آفس‘طریقہ کار پر منتقل کریں۔حکومت نے مزید کہا ہے کہ7مارچ کے بعد سیول سیکر یٹریٹ میںکسی بھی قسم کی فائلوں کو پرانی طریقہ کار پر نہیں دیکھا جائیگا۔گزشتہ سال ستمبر میں، حکومت نے ایک سرکیولر جاری کیا تھا جس میں محکمہ کے تمام سربراہان سے کہا گیا تھا کہ وہ محکمہ انفارمیشن ٹیکنالوجی سے ’’مدد اور رہنمائی‘‘ کے ساتھ کام کو ای ،آفس موڈ میں تبدیل کریں۔حکومت نے کہا کہ تمام محکموں کے سربراہان کوکو انفارمیشن ٹکنالوجی  محکمہ کی طرف سے وی پی این کنکشن کی فراہمی، ڈومین (@jk.gov.in) کی تخلیق اور مقامی ایڈمنز کی تربیت کے ذریعے ضروری مدد فراہم کی گئی۔ سرکیولر میں کہا گیا’’مذکورہ بالا ہدایات، ٹائم لائنز میں توسیع اور ترتیب دیئے گئے انتظامات کے باوجود، یہ دیکھا گیا ہے کہ بہت سے  محکموں کے سربراہان کے دفاتر ابھی بھی ای،آفس موڈ پر مکمل طور پر کام نہیں کر رہے ہیں اور اپنے متعلقہ انتظامی سیکرٹریوں کو فزیکل فائلیں و ڈاک بھیجتے رہتے ہیں، اور یہ ایک ایسا معاملہ ہے، جسے حکام نے سنجیدگی سے دیکھا ہے‘‘۔سرکیولر کے مطابق’’ تمام انتظامی سیکرٹریوں کو حکم دیا گیا ہے کہ وہ اپنے انتظامی کنٹرول میں کام کرنے والے محکموں کے سربراہان کو فوری طور پر کام کرنے کے طریقہ کار کو ای،آفس موڈ میں تبدیل کرنے کی ہدایت کریں جبکہ فائلوں اور ڈاک کو زیر غور نہیں لایا جائے گا‘‘۔