دشنامی اکھاڑے سے چھڑی مبارک گھپاکیلئے روانہ

سرینگر//وادی میں سخت سیکورٹی کے بیچ ’’بم بم بھولے اور ہر ہر مہادیو کے نعروں کے ساتھ چھڑی مبارک یاترا امرناتھ گپھا کیلئے دھوم دھام سے سرینگر کے دشنامی اکھاڑے سے روانہ ہوئی اور بدھ کو شام دیر گئے چھڑی مبارک پہلگام پہنچ گئی ۔ہر سال منعقد ہونے والی اس یاترا کے تحت بھگوان شیو کے چاندی کی چھڑی کو مقامی رامیشور مندر سے امرناتھ لے جایاجاتا ہے۔ چھڑی مبارک 7 اگست کو گپھا پہنچے گی۔ اس کے ساتھ ہی امرناتھ کی یاترا اختتام پذیر ہوجائے گی۔بدھ کو دشنام اکھاڑہ بڈشاہ چوک سے چھڑی مبارک کو صبح سوا پانچ بجے جنوبی کشمیر کے اننت ناگ ضلع کے پہلگام کیلئے روانہ کیا گیا۔یہ چھڑی مبارک ہر سال یاترا کے اختتام پر نکلتی ہے ۔اس دوران چھڑی مبارک نکالنے کے دوران یاتریوں نے جے بم بولے، ہر ہر مہادویو کے نعرے بلند کئے ۔ درگاناتھ ٹرسٹ کے سیکٹری ڈاکٹر اوپی نکاشی نے کشمیر عظمی ٰ کو بتایا کہ یہ چھڑی مبارک اکھاڑے سے نکل کر درگاناتھ مندر جائے گی جہاں پوجا پاٹ کرنے کے بعد اندرانگر میں شریار مندر کے درشن کئے۔ اس کے بعد پانپور ،پانپور سے شیو مندر بجبہاڑہ اور اس کے بعد مٹن پھر وہاں سے شام دیر گئے چھڑی مبارک پہلگام پہنچ جائے گی اورآج یہ چھڑی مبارک امرناتھ گپھا کی طرف روانہ ہو جائے گی جہاں 7اگست کو پوجا پاٹ کا اہتمام ہوگا۔انہوں نے کہا کہ ہر سال یہ چھڑی مبار ک یاترا کے اختتام پر سرینگر سے گپھا کی طرف روانہ ہوتی ہے ۔ چھڑی مبارک کی تقریب کے دوران درگاناتھ مندر کے سیکریٹری ڈاکٹر اوپی نکاشی ، ڈستہ دیوی ٹرسٹ کے صدر بی بی بٹ ، سکریٹری این پی سی اشوک کے علاوہ سماجی کارکن روندر ٹکو اور دیگر لوگوں نے شرکت کی ۔