دریائے دیوکا اور توی میں آلودگی کو کم کرنے کی پیش رفت کا جائزہ

جموں//چیف سیکرٹری ڈاکٹر ارون کمار مہتا نے ادھمپور قصبے میں دریائے دیوکا اور توی کی آلودگی میں کمی کی پیش رفت کا جائیزہ لینے کیلئے منعقدہ ایک میٹنگ کی صدارت کی ۔ ہاوسنگ اینڈ یو ڈی ڈی کے انتظامی سیکریٹریوں ، ڈویژنل کمشنر جموں ، ڈپٹی کمشنر اودھمپور ، چیف انجینئر یو ای ای ڈی اور دیگر اعلیٰ افسران نے میٹنگ میں شرکت کی ۔ تفصیلات فراہم کرتے ہوئے انتظامی سیکرٹری ایچ اینڈ یو ڈی ڈی نے بتایا کہ 186.74 کروڑ روپے کا پروجیکٹ مکمل ہونے کے بعد ضلع میں تقریباً 76041 لوگوں کو فائدہ پہنچے گا ۔ انہوں نے مزید بتایا کہ منصوبے کے پیکج کے تحت گھاٹوں کی تعمیر مکمل ہو چکی ہے حالانکہ اس میں پانچ ماہ کی تاخیر ہوئی ہے ۔ یہ بتاتے ہوئے کہ منصوبے کے پیکج II کے تحت 124.22 کلو میٹر کے سیوریج نیٹ ورک کی تعمیر میں صرف 39 فیصد کی فزیکل پیش رفت ہوئی ہے ، چیف انجینئر یو ای ای ڈی نے بتایا کہ اس حقیقت کے باوجود کہ تھیکیدار کی جانب سے پروجیکٹ میں نمایاں تاخیر ہوئی ہے ، سزا دی گئی ۔ ڈویژنل کمشنر نے بتایا کہ انہوں نے ڈیپارٹمنٹل انجینئرز سے کہا ہے کہ وہ سرگرمی میں تاخیر کا چارٹ تیار کریں اور کنٹریکٹ کے مطابق عائد کئے جانے والے جرمانے پر کام کریں ۔ ڈی سی اودھمپور نے اودھمپور ٹاؤن کے مکینوں میں پیدا ہونے والی ناراضگی کو ان علاقوں کے بارے میں بتایا جہاں ٹھیکیدار نے پروجیکٹ کیلئے سڑک کے کنارے کھود لئے ہیں اور انہیں طویل عرصے سے ری فل /بحال نہیں کیا ہے ۔ انتظامی سیکرٹری ایچ اینڈ یو ڈی ڈی نے بتایا کہ محکمہ کچھ عرصے سے پروجیکٹ کی جلد تکمیل کیلئے متبادل اختیارات تلاش کر رہا ہے اور اس سلسلے میں تمام ضروری اقدامات کئے جائیں گے ۔ یہ بتاتے ہوئے کہ پروجیکٹ کی تکمیل میں تیزی لائی جائے چیف سیکرٹری نے محکمہ کو ہدایت دی کہ وہ عملدرآمد کی رفتار کو بہتر بنانے کیلئے معاہدے کے مطابق تمام ضروری اقدامات کرے ۔ ڈاکٹر مہتا نے محکمہ سے کہا کہ وہ ٹھیکیدار کو جرمانہ کرے جس میں وہ فوری طور پر سائٹ پر کام کی رفتار کو بہتر نہیں کرتا ہے ۔ چیف سیکرٹری نے ڈی سی اودھمپور کو ہدایت دی کہ وہ پروجیکٹ کی پیش رفت کی مسلسل نگرانی کریں اور اس پر عمل آوری کی سست رفتاری پر ان کے خدشات کو دور کرنے کیلئے ضلع کے لوگوں سے بھی بات چیت کی ۔