درہالی پل کے قریب سڑک کی خستہ حالی باعث عذاب سڑک تالاب میں تبدیل ،پیدل کجا گاڑیوں کا چلنا بھی انتہائی مشکل

 عظمیٰ نیوز سروس

راجوری//راجوری قصبہ میں درہالی پل اور ایٹی کے درمیان مین سڑک کی خستہ حالی کی وجہ سے سڑک پر پانی کے تالاب کی وجہ سے حادثات کا مرکز بن گیا ہے جس سے دو پہیہ والوں کا اس پر گاڑی چلانا ناممکن ہو گیا ہے۔یہ سڑک زمینی نقل و حمل کا ایک اہم حصہ ہے کیونکہ یہ راجوری شہر سے درہال کے ساتھ ساتھ تھنہ منڈی تک کی اہم سڑک ہے اور مغل روڈ سے بھی جڑتی ہے۔درہالی پل کے قریب رہنے والے مقامی لوگوں نے بتایا کہ راجوری قصبہ سے تھنہ منڈی تک سڑک کو اپ گریڈ کیا جا رہا ہے جس کا نام سڑک کا نام راجوری تھنہ منڈی سرنکوٹ روڈ ہے لیکن راجوری شہر سے اس سڑک کے پہلے پانچ کلومیٹر کا کام ابھی ہونا باقی ہے۔مقامی لوگوں نے بتایا کہ اس پہلے پانچ کلومیٹر کے راستے پر سڑک انتہائی خستہ حالی میں ہے کیونکہ بارڈر روڈز آرگنائزیشن کو پرانی الائنمنٹ کو چھوڑ کر ایک بائی پاس سڑک بنانا ہے اور کوئی دیکھ بھال اور مرمت نہیں کی جا رہی ہے۔علاقے سے تعلق رکھنے والے محمد عزیر نے بتایا کہ درہالی پل سے تھنہ منڈی سائیڈ تک تقریباً تین سو میٹر سڑک تالاب میں تبدیل ہو چکی ہے۔انہوں نے کہا کہ طلباء اور دیگر لوگ روزمرہ کے کام کے لیے اس سڑک پر اپنی دو پہیہ گاڑیاں چلاتے ہیں لیکن آج کل وہ تالاب میں تبدیل ہونے والی اس سڑک پر اپنی گاڑیاں نہیں چلا پا رہے ہیں۔دیگر مقامی لوگوں بشمول عمر احمد اور دیگر نے بتایا کہ اس خستہ حال راستے کی کوئی دیکھ بھال اور مرمت نہیں کی جا رہی ہے اور ہزاروں لوگوں کو روزانہ کی بنیاد پر پریشانی کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے کیونکہ تھنہ منڈی، درہال اور یہاں تک کہ سرنکوٹ سے گاڑیاں صرف اسی راستے سے راجوری شہر پہنچتی ہیں۔ضلعی انتظامیہ کے عہدیداروں نے بتایا کہ مقامی لوگوں کی طرف سے معاملہ ان کے نوٹس میں لایا گیا ہے اور اس کے مطابق متعلقہ ایجنسی جو کہ بارڈر روڈز آرگنائزیشن ہے، کے ساتھ معاملہ کو اٹھایا جا رہا ہے۔