خورشید گنائی کا جموں میں شکایت ازالہ کیمپ

 جموں//گورنر کے مشیر خورشید احمد گنائی نے اتوار کو جموں میں ایک شکایت ازالہ کیمپ کا اہتمام کیا جس میں بھاری تعداد میں کٹھوعہ، سانبہ، راجوری، ریاسی، ڈوڈہ، ادہم پور، پونچھ ، رام بن اور کشتواڑ سے آئے ہوئے عوامی وفود کے ساتھ ملاقات کر کے ان کے مسائل کے بارے میں جانکاری حاصل کی اور ان کے ازالہ کے لئے موقعہ پر ہی متعلقہ حکام کو ہدایات جاری کیں۔ جموں کشمیر پرائیویٹ اسکول ایجوکیشن کا ایک وفد گورنر کے مشیر سے ملااور اپنے مطالبات ان کے سامنے رکھے۔ مشیر موصوف نے نجی اداروں کی خدمات کو سراہتے ہوئے انہیں معیاری تعلیم فراہم کرنے کے ساتھ ساتھ سماج کو صحت مند بنانے میں اپنا کردار ادا کرنے کی تلقین کی۔ نجی اداروں کی تنظیم نے پرائیویٹ اسکولوں کی فیس مقرر کئے جانے کی مانگ کرتے ہوئے وردیوں اور دیگر مسائل میں یکسانیت پیدا کئے جانے کی مانگ کی۔ مینڈھر سے آئے ہوئے وفد نے مینڈھر میں منی سیکرٹریٹ کی تعمیر، سڑکوں کی حالت بہتر بنانے، ہینڈ پمپوں کی تنصیب، ڈاک بنگلہ عمارت کی تعمیر، سیلف ہیپ گروپوں کے بقایہ جات کی فراہمی اور ایڈمنسٹریٹر اوقاف کا عہدہ   تشکیل دینے کا مطالبہ کیا۔ ٹانڈہ ریاسی سے آئے ہوئے وفد نے مڈل اسکول ٹانڈہ میں عملہ کی قلت دور کرنے اور واٹر سپلائی اسکیم کو اپ گریڈ کرنے کی مانگ کی۔ جسمانی طور ناخیر افراد کے وفد نے ایک الگ محکمہ تشکیل دینے اور ریاستی مشاورتی بورڈ کے قیام کے علاوہ امب گھروٹہ میں ریجنل سنٹر کی تعمیر کی مانگ سامنے رکھی۔  ایس سی ، ایس ٹی، او بی سی تنظیم نے ترقیوں میں پرموشن کی بحالی اور بیک لاگ اسامیاں پر کرنے کے ساتھ ساتھ او بی سی ، واتل و صفائی کرمچاریوں کے لئے 27فیصد ریزرویشن کا مطالبہ کیا۔ کٹھوعہ اور جاگرتی سماج بسوہلی کے وفد نے دھار دگنو میں پرائمری ہیلتھ سنٹر کے قیام ، سڑک کی تعمیر ، پینے کے پانی کی فراہمی ، ہائر سکینڈری اسکول سیری کے قیام کا مطالبہ کرنے کے ساتھ ساتھ بنہور پانی سپلائی اسکیم اور ڈامبرا پنچات میں بنیادی سہولیات کی فراہمی کا مطالبہ ، کونین، دھیرن، برگالتہ، پیالہ، دھنوالت رام نگر سے آئے وفد نے کونین میں ہائر سکینڈی کے قیام کی مانگ کی۔