خواتین کیلئے منافع بخش روزگار کے مواقع

بارہمولہ//لیفٹیننٹ گورنر کے مشیر فاروق خان نے جموںوکشمیرمیں خواتین کیلئے منفعت بخش روزگار کی فراہمی کیلئے جموں و کشمیر وومنزڈیولپمنٹ کارپوریشن کے تحت متبادل سرگرمیاں شروع کرنے کی ضرورت پر زور دیا۔ مشیر خان جو جموںوکشمیر وومنز ڈیولپمنٹ کارپوریشن کے چیئرمین ہے ، نے یہاں کارپوریشن کے بورڈ آف دائریکٹر س کی 25ویں میٹنگ کی صدارت کرتے ہوئے اپنے خیالات کا اظہار کر رہے تھے۔ میٹنگ میں پرنسپل سیکرٹری سماجی بہبود شیلندر کمار، ڈائریکٹر جنرل منصوبہ بندی و نگرانی محکمہ شہزادہ بلال احمد،منیجنگ ڈائریکٹر جے کے ڈبلیو ڈی سی ناہید سوز، ڈائریکٹر جنرل بجٹ ، ایم وائی ایتو اوربورڈ آف ڈائریکٹرس کے دیگر ممبران موجود تھے جبکہ چیئرمین کم منیجنگ ڈائریکٹر نیشنل ہینڈی کیپڈ فائنانس ڈیولپمنٹ کارپوریشن (این ایچ ایف ڈی سی) نئی دہلی، چیئرمین کم منیجنگ ڈائریکٹر نیشنل اقلیتی ترقی و فائنانس کارپوریشن (این ایم ڈی ایف سی) دہلی اور منیجنگ ڈائریکٹر قومی پسماندہ طبقات فائنانس اینڈ ڈیولپمنٹ کارپوریشن (این بی سی ایف ڈی سی) نئی دہلی نے بذریعہ ویڈیو کانفرنسنگ میٹنگ میں شرکت کی۔ دوران میٹنگ منیجنگ ڈائریکٹروومنز ڈیولپمنٹ کارپوریشن نے جانکاری دی کہ کارپوریشن خواتین کی سماجی و معاشرتی حالت بہتر بنانے کے لئے متعدد ترقیاتی سکیموں کو لاگو کر رہی ہے اور اِس ضمن میں سماج کے پسماندہ طبقوں کے وابستہ خواتین اور اہل خواتین صنعت کار پر خصوصی توجہ مرکوز کی جار ہی ہے۔اُنہوں نے میٹنگ کو کارپوریشن کی جانب سے سماجی و معاشی طور پسماندہ خواتین کو اِقتصادی طور بااِختیار بنانے کے لئے کارپوریشن سے چلائی جارہی سکیموں کے بار ے میں جانکاری دی ۔ میٹنگ میں بتایا گیا کہ ڈبلیو ڈی سی نے مختلف مرکزی او رریاستی معاونت سکیموں کے تحت مستحقین میں 216.73 کروڑ روپے 17,294مستحقین میں تقسیم کئے ہیں۔میٹنگ میں مزید بتایا گیا کہ 7337مستحقین کو مختلف پیشوں میں پیشہ وارانہ تربیت فراہم کی گئی اور تربیت کی فراہمی کے دوران سیلف ہیلپ گروپوں کے حق میں 6.96کروڑ روپے کی رقم حکومت ہند کی مائیکرو فائنانس سکیم کے تحت تقسیم کئے گئے ۔اُنہوں نے جموںوکشمیر او رقومی سطح پر 43نمائشوں کا اِنعقاد کیا ہے اور مختلف بین الاقوامی نمائشوں میں بھی شرکت کی ہے۔بورڈ کو مزید بتایا گیا کہ کووِڈ ۔19وَبا کے دوورا ن ڈبلیو ڈی سی نے جموںوکشمیرکے اَضلاع کی انتظامیہ کو سپلائی آڈر کے تحت 2, 42,105ماسکس سپلائی کئے ہیں۔ بورڈ نے کارپوریشن کی سرگرمیوں، حصولیابیوں ،عمل درآمد رِپورٹوں اور سال 2019-20کے لئے اکائونٹس کم بیلنس شیٹ منظور اور اختیار کرنے پر غو رو خوض کیا۔ دوران میٹنگ مختلف معاملات پر غور وخوض ہوا جن میں 24میں بورڈ آف ڈائریکٹر س کی میٹنگ میں لئے گئے  فیصلہ جات پر درآمد 2018-19 کے لئے رقومات کی منظوری کنسالٹیڈ فیلڈ سپر وائزرس کے حق میں کی اُجرتوں میں اضافہ کرنے ، ڈبلیو ڈی سی کے مصنوعات کی برینڈنگ کرنے ،جموں میں ڈبلیو ڈی سی دفتر کے لئے عمارت کی تعمیر،خالی پڑی اَسامیوں کو پُر کرنے اور دیگر متعلقہ معاملات پر غور و خوض کیا۔