خطہ چناب کے تینوں اضلاع میں شدید بارشیں،متعدد سڑکیں زیر آب،فصلوں کو نقصان ٹھاٹھری ڈوڈہ قومی شاہراہ سمیت اندرونی دیہات کی رابطہ سڑکیں زیر آب

اشتیاق ملک
ڈوڈہ // ڈوڈہ ضلع کے بالائی علاقوں میں ہفتہ کے روز بھی شدید بارش ہوئی جس کے نتیجے میں ٹھاٹھری ڈوڈہ قومی شاہراہ سمیت اندرونی دیہات کی رابطہ سڑکیں زیر آب آ گئیں جبکہ بڑے پیمانے پر فصلوں و پھلدار درختوں کو نقصان پہنچا۔اطلاعات کے مطابق ہفتہ کے روز ڈوڈہ ڈوڈہ کے بھدرواہ ،ٹھاٹھری و گندوہ میں دوپہر تک بارش جاری رہی جس کے نتیجے میں مقامی ندی نالوں میں پانی کی سطح میں اضافہ ہوا جبکہ فصلوں، پھلوں و زرعی شعبے کو بھی نقصان پہنچا۔اس دوران زیر تعمیر ٹھاٹھری تا ڈوڈہ قومی شاہراہ پر بھی بیشتر حصہ میں پانی جمع ہوا جبکہ اندرونی دیہات کی رابطہ سڑکیں و گلی کوچے بھی زیر آب آگئے۔ انتظامیہ نے لوگوں سے موسمی تبدیلی کو مدنظر رکھتے ہوئے بارشوں کے دوران ندی نالوں سے دور رہنے و بجلی کے کھمبوں و ترسیلی نظام سے بھی محتاط رہنے کی اپیل کی ہے۔واضح رہے کہ تین روز قبل ڈوڈہ ضلع کی تحصیل کاہرہ چارواہ میں شدید بارشوں و بادل پھٹنے سے ایک نجی سکول عمارت سمیت 26 ڈھانچے سیلاب میں بہہ گئے تھے وہیں درجنوں دیگر تعمیرات، پانی، بجلی و سڑک نظام کو بھاری نقصان پہنچا تھا اور فصلیں و میوہ باغات تباہ ہوئے ہیں۔

 

ادھم پورنالہ میں پھنسے 4 افراد کو بچالیا گیا
جموں//جموںکے ادھم پور علاقے میں بارشوں کے دوران بادل پھٹنے کے نتیجے میں ایک نالے میں زبردست پانی آیا جس کے نتیجے میں چار افراد نالے کے اندر پھنس گئے ہیں جن کو بعد میں بچاو کارروائیوں میں شامل ٹیموں نے بچا لیا ۔ ضلع ادھم پور میں سیلاب میں پھنسے چار افراد کو پولیس اور ایس ڈی آر ایف کی مشترکہ کارروائی میں بچا لیا گیا۔حکام نے بتایا کہ پولیس چوکی راؤنڈ میل پر مقامی لوگوں کے ذریعے اطلاع ملی کہ چار افراد سنجیو کمار، ملکھ راج، اجے کمار اور سشیل کمار ضلع کے ڈھنڈال میں بارمین نالہ میں سیلاب میں پھنس گئے ہیں۔انہوں نے بتایا کہ ریاستی ڈیزاسٹر ریلیف فورس کے ساتھ پولیس موقع پر پہنچی اور آپریشن شروع کیا اور چاروں افراد کو بچا لیا۔مقامی لوگوں نے ایس ڈی آر ایف اور پولیس کی جانب سے بروقت ریسکیو آپریشن شروع کرنے پر ان کی سراہنا کی۔یہا ں یہ بات قابل ذکر ہے کہ جموںو کشمیر میں گزشتہ کئی روز کے دوران وقفے وقفے کی بارشوں کی وجہ سے ندی نالوں میں تغیانی آئی ہے تاہم بارشوں کے زور کم نہیں ہو تے ہیں ۔

 

گدھری کیشوان میں آسمانی بجلی گری،2 افراد ومتعدد بکریاں زخمی
بارشوں سے دچھن میں کھڑی فصلوں کو نقصان،متاثرین کو امداد فراہم کرنے کی مانگ
عاصف بٹ
کشتواڑ//ضلع کشتواڑ کے علاقہ کیشوان کے گدھری میں سنیچر کی صبح آسمانی بجلی گرنے سے دوافراد زخمی ہوئے جنھیں مزید علاج و معالجے کیلئے ضلع ہسپتال منتقل کیا گیا۔ کشمیر عظمی کو ملی تفصیلات کے مطابق یہ واقعہ گدھری میں پیش آیا جب آسمانی بجلی گرنے سے دو افراد شدید زخمی ہوئے جنکی پہنچان جمیل الدین و نور محمد ولد موسا گوجر کے طور ہوئی ہے۔ جبکہ انکی متعدد بکریاں و ایک بھینس شدید زخمی ہوئی ہے ۔زخمی افراد کو فوری طور علاج ومعالجے کیلئے ضلع ہسپتال کشتواڑ منتقل کیا گیا ۔لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا نے بھی ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ انھوں نے ضلع انتظامیہ سے زخمی افراد کو بہتر علاج مہیاکرنے کو کہا ہے اور انکے اہل خانہ کو مدد کرنے کی اپیل کی ہے۔ادھرسنیچر کی صبح ضلع کشتواڑ کے میدانی و بالائی علاقوںمیں ہوئی بارشوں سے میوہ باغات و کھڑی فصلوں کو نقصان پہنچاہے۔علاقہ دچھن کے ٹنڈر میں مکئی، فلی و مٹر کی کھڑی فصل کو بھاری بارشوں و تیز ہوائوں کے سبب نقصان پہنچاہے اور فصلیں ٹوٹ چکی ہیں۔ علاقہ کے مقامی شخص غلام رسول نے بتایا کہ جہاں میوہ باغات کو نقصان ہوا وہیں فصل جن میں فلی، مٹر و مکئی شامل ہیں،کو بھی مکمل طور نقصان پہنچاہے۔انہوںنے کہا کہ لوگوںنے قرضہ لیکر فصل تیار کی تھی لیکن سب ضائع ہوگئی۔ انھوں نے ضلع انتظامیہ سے ٹیموں کو علاقہ میں بھیج کر فوری طور نقصانات کاجائزہ لیکرمعقول معاوضہ فراہم کرنے کامطالبہ کیا۔