خشک موسم میں راجوری کے جنگلا ت آگ کے واقعات کا شکار | نوشہرہ فارسٹ ڈویژن میں 18 ہیکٹر جنگلاتی رقبہ تباہ، ایڈوائزری جاری کی گئی

سمت بھارگو
راجوری//خشک موسم اور درجہ حرارت میں اضافے کیساتھ راجوری ضلع کے جنگلات آگ لگنے کے واقعات کا شکار ہو رہے ہیں ۔گزشتہ ایک ماہ میں چودہ واقعات رپورٹ ہوئے ہیں اور صرف نوشہرہ سب ڈویژن میں اٹھارہ ہیکٹر جنگلاتی رقبہ کو نقصان پہنچا ہے۔ضلع مجسٹریٹ نے اب ایک ایڈوائزری بھی جاری کی ہے جس میں لوگوں سے جنگل میں آگ لگنے کے واقعات کی معلومات بروقت شیئر کرنے کو کہا گیا ہے اور جنگل میں آگ لگانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کا انتباہ دیا گیا ہے۔حکام کے مطابق، بارش کی کمی اور درجہ حرارت میں اضافے کے درمیان خشک موسم چل رہا ہے جس کی وجہ سے جنگلات کی زمین خشک اور آگ لگنے کے واقعات کا بہت زیادہ خطرہ ہے۔ان کا کہنا تھا کہ گزشتہ چند ہفتوں کے دوران ضلع بھر میں آتشزدگی کے متعدد واقعات رونما ہوئے ہیں جن میں جنگلاتی پٹیوں اور نباتات اور حیوانات کو بڑے پیمانے پر نقصان پہنچا ہے۔ڈویژنل فارسٹ آفیسر نوشہرہ، نیلیما شاہ نے کشمیر عظمیٰ کو بتایا کہ نوشہرہ فاریسٹ ڈویژن میں پچھلے ایک ماہ کے دوران جنگلات میں آگ لگنے کے چودہ واقعات رپورٹ ہوئے ہیں۔انہوں نے مزید بتایا کہ ان واقعات میں اٹھارہ ہیکٹر جنگلاتی رقبہ کو نقصان پہنچا ہے۔آفیسر موصوف نے لوگوں سے اپیل کی کہ وہ آگ کے واقعات کی روک تھام میں محکمہ کی مدد کریں۔انہوں نے کہا کہ وہ تمام شعبوں سے تعلق رکھنے والے لوگوں سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ جنگل کی آگ سے لڑنے میں محکمہ کی مدد کریں۔دریں اثناء ضلع مجسٹریٹ راجوری نے ضلع کے لوگوں کے لئے ایک ایڈوائزری جاری کی ہے جس میں جنگلات میں آگ لگنے کے واقعات کی بروقت معلومات شیئر کرنے کی اپیل کی ہے۔ڈسٹرکٹ مجسٹریٹ نے سول سوسائٹی کے اراکین،منتخب نمائندوں و نجی رضار کار تنظیموں اور ضلع کے عام لوگوں سے جنگل کی آگ سے لڑنے میں حکام کی مدد کرنے کی درخواست کی ہے۔ڈی ایم راجوری نے قانون کی فراہمی کا بھی ذکر کیا ہے جس میں جرم میں ملوث افراد کے خلاف کارروائی کی جاسکتی ہے۔