حکومت جموںوکشمیر میں اقلیتوں کی فلاح و بہبود کیلئے پُر عزم :سید شہزادی

یواین آئی
سرینگر// قومی اقلیتی کمیشن کی کار گذار چیئرپرسن سید شہزادی کا کہنا ہے کہ کمیشن نے دلی کے جہانگیرپوری میں انہدامی مہم کا نوٹس لیا ہے اور اگر کچھ غلط ہوا ہے تو کمیشن اس کے خلاف کارروائی کرے گا۔انہوں نے کہا کہ کمیشن کے چیئرمین اور دیگر ممبران نے جہانگیر پور ی کا دورہ کیا اور وہ اس سلسلے میں حکومت کے سامنے رپورٹ پیش کریں گے ۔موصوف چیئر پرسن نے ان باتوں کا اظہار جمعرات کو یہاں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کے دوران کیا۔ انہوں نے کہا،”ہم حکومت کو رپورٹ پیش کریں گے اور اگر کچھ غلط ہوا ہے تو اس ضمن میں کارروائی کریں گے“۔ان کا کہنا تھا کہ جہانگیر پوری انہدامی کارروائی کے بارے میں مرکزی وزارت داخلہ کو رپورٹ پیش کی جائے گی اور اگر کچھ غلط ہوا ہے تو کمیشن یقینی طور پر اس کے خلاف کارروائی کرنے کی سفارش کرے گا۔ملک میں مسلمانوں پر ہو رہے حملوں کے بارے میں پوچھے جانے پر سید شہزادی نے کہا کہ ملک میں سب کچھ ٹھیک ہے ۔انہوں نے کہا،”کچھ لوگ ہمارے درمیان دراڈیں پیدا کرنا چاہتے ہیں لیکن ہمیں اس معاملے کی طرف سے کان نہیں دھرنا چاہئے بلکہ ہمیں ترقی کی طرف توجہ مرکوز کرنی چاہئے “۔ان کا کہنا تھا،”کچھ اقلیتی تنظمیں اور بیرونی طاقتیں ہمیں ایسا ہی رکھنا چاہتی ہیں وہ ہماری ترقی کے خلاف ہیں لیکن یہاں سب کچھ ٹھیک ٹھاک ہے “۔کشمیر میں اقلیتی فرقے کے لوگوں پر ہونے والے حملوں پر پوچھے جانے پر موصوف چیئر پرسن نے کہا کہ یہاں اس نوعیت کے کچھ واقعات پیش آتے ہیں لیکن انہیں ایجنڈا بنانے کی ضرورت نہیں ہے ۔انہوں نے کہا،”جو غلط کام کرتے ہیں انہیں سزا ملنی چاہئے خواہ وہ ہندو فرقے سے تعلق رکھتے ہوں یا مسلمان، عیسائی یا سکھ فرقوں کے لوگ ہوں“۔ان کا کہنا تھا کہ معاشرے میں امن قائم کرنے کے لئے تمام مذہبوں کے لوگ اہمیت کے حامل ہیں۔انہوں نے کہا کہ ملک صرف ہندو اور مسلمانوں سے ترقی نہیں کرسکتا ہے بلکہ ملک کی تعمیر و ترقی کے لئے تمام مذہبوں کے لوگوں کو کوشش کرنی ہے ۔پریس کانفرنس کے دوران اقلیتوں کے قومی کمیشن کی کام چلاﺅچیئرپرسن سیدشہزادی نے کہا ہے کہ مرکزی حکومت جموں کشمیرمیں اقلیتی طبقوں کی فلاح وبہبود اورترقی کو یقینی بنانے کےلئے پرعزم ہے ۔ سیدشہزادی نے کہا حکومت جموںوکشمیر کی مجموعی ترقی پر خصوصہ توجہ دے رہی ہے اور اِس سلسلے میں بہت سی سکیمیں اور اقدامات اُٹھائے جارہے ہیں۔اُنہوں نے کہا کہ جب ہم مل کر کام کریں گے تو پوری قوم ترقی کرے گی اور سب سے اپیل کی کہ وہ اَمن اور ترقی میں اَپنا حصہ اَدا کریں۔سیّد شہزادی 18اپریل سے 21 اپریل تک جموںوکشمیر کے چار روزہ دورے پر تھیں جس دوران اُنہوں نے اقلیتی گروپوں سے بات چیت کی اور اُن کے مسائل سنے ۔ اُنہوں نے کہا کہ اقلیتی گروپوں کی طرف سے اُجاگر کئے گئے مسائل کو متعلقہ حکام کے نوٹس میں لایا جائے گا تاکہ معیارزندگی کو بہتر بنا یا جاسکے۔اُنہوں نے اقلیتوں کی فلاح و بہبود کے لئے مختلف سکیموں اور پروجیکٹوں پر روشنی ڈالتے ہوئے کہا کہ پی ایم جے وی کے ، کے تحت جموںوکشمیر کے لوگوں کو بہتر صحت، تعلیم اور دیگر سہولیات فراہم کرنے کے لئے 314.33 لاکھ کے 19پروجیکٹوں کو منظوری دی گئی ہے۔اُنہوں نے یہ بھی کہا کہ حکومت اقلیتی برادریوں کے طلباءکو معیاری تعلیم تک رَسائی فراہم کرنے کے لئے پُر عزم ہے ۔ اُنہوں نے کہا کہ حکومت سستی ، قابل رَسائی اور معیاری تعلیم سے ان طلباءکی فلاح و بہبود کو یقینی بنانے کے لئے اِنتہائی خلوص کے ساتھ کام کر رہی ہے اور بہت سے سکیمیں اور وظائف سے اُنہیں فائدہ پہنچ رہا ہے۔اُنہوں نے تفصیلات دیتے ہوئے کہا کہ جموںوکشمیر کے طلباءکو پری میٹرک اور پوسٹ میٹرک سکالر شپ کے تحت بالترتیب 6.94 کروڑ اور 26.3 کروڑ کی رقم منظور کی گئی ہے۔جموںوکشمیر کے 50 طلباءکو سال 2021-22ءکے لئے مفت کوچنگ کے فوائد فراہم کئے گئے ہیں جس کے لئے مرکزی حکومت نے 39لاکھ کی رقم منظور کی ہے ۔اُنہوں نے نئی اُڑان سکیم کے تحت کہا کہ کشمیر کے 315 طلباءنے سول سروسز اِمتحان کی تیاری کے لئے کوالیفائی کیا ہے ۔اُنہوں نے مزید کہا کہ نئی منزل اورنئی روشنی سکیموں سے 7,750اور 2,450 مستفید یں کی مدد کی گئی ہے ۔ سکے۔ انہوں نے منصوبے کے تمام کاموں کے معیار کو برقرار رکھنے پر زور دیا۔ انہوں نے پی ڈی ڈی افسران کو ہدایت کی کہ وہ کام کی جگہ پر بلاتعطل بجلی کو یقینی بنائیں تاکہ وہ رات کو بھی کام کر سکیں۔ انہوں نے ضلع میں محکمہ جات کی طرف سے کئے گئے مختلف ترقیاتی کاموں کا بھی معائنہ کیا۔