حضرتبل میں شہادت خلیفہ سوم ؓپربڑی تقریب

سرینگر //عرس مبارک (شہادت )خلیفہ سوم سید ناحضرت عثمان غنی ؓ کے سلسلے میں پوری ریاست میں مساجد، خانقاہوں اور زیارت گاہوں میں تقریبات منعقد کی گئیں۔سب سے بڑی تقریب آثار شریف حضرتبل میں منعقد ہوئی جہاں ہزاروں عاشقان رسول ﷺ نماز ظہر ادا کرنے کے بعد موئے مبارک کے دیداد سے فیضیاب ہوئے ۔ آثار شریف شہری کلاش پورہ میں نماز ظہر سے قبل میر واعظ مولانا ہمدانی نے حضرت عثمان غنی ؓ اور اُن کی سخاوت علمی اور روحانی کمالات پر وعظ وتبلیغ فرماتے ہوئے کہا کہ حضرت عثمان غنی ؓ نے سخاوت اور قران مجید کی ترتیب وجمع میں جوملی خدمات انجام دی، وہ ہمارے لئے مشعل راہ ہے۔ آستان عالیہ میں ہر نماز کے بعد حضورﷺ کے موئے مبارک کی نشاندہی کرائیگی ۔ایسی ہی تقریب آثار شریف جناب صورہ ، پنجورہ ، شوپیاں ،کعبہ مرگ ،سیر ہمدان ،لعل بازار ،ڈانگر پورہ اور اندواری کے علاوہ دیگر کئی علاقوں میں منعقد ہوئیں ۔ ادھر خلیفہ سوم حضرت امیرالمومنین عثمان ذوالنورین ؓ کے یوم شہادت پر انجمن حمایت الاسلام کے صدر مولانا خورشید احمد قانونگو نے اپنے پیغام میں کہا کہ حضرت عثمان غنیؓ نے بین المسلمین میں خونی تشدد کی روک و اتحاد کیلئے اپنی جان پیش کی۔ اسلام میں مشکلات و مصائب کے وقت اپنا مال پیش کرکے حضور اقدس ﷺ کے بشارت جنت حاصل کی۔واضح رہے کہ حضرت عثمان غنیؓ کی شہادت اسلام میں ایک المناک واقعہ اور پہلا سیاسی فتنہ ہے اس کی تلافی و سدباب آج تک ممکن نہیں ہوئی۔