حد متارکہ پر کشیدگی برقرار،کیری سیکٹر میں فوجی اہلکار زخمی

راجوری //حد متارکہ پر حالات بدستور کشیدہ ہیں اور اتوار کو فائرنگ کے نتیجہ میں کیری سیکٹر راجوری میں ایک فوجی اہلکار زخمی ہوگیا ۔ذرائع نے کشمیرعظمیٰ کو بتایاکہ یہ فوجی اہلکاراس وقت زخمی ہواجب وہ حد متارکہ پر ڈیوٹی سرانجام دے رہاتھاکہ اچانک اس کے کندھے پر گولی لگی ۔ذرائع کاکہناہے کہ زخمی اہلکار کی حالت خطرے سے باہر ہے ۔ذرائع نے مزید بتایاکہ یہ واقعہ سنائپر حملہ لگتاہے اور ماضی میں بھی کئی مرتبہ حدمتارکہ پر تعینات اہلکاروں کو سنائپر کے ذریعہ نشانہ بنایاجاچکاہے ۔یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ راجوری میں حد متارکہ پر حالات کشیدہ بنے ہوئے ہیں اورجمعرات کوفوج کا ایک میجر اور بی ایس ایف ہیڈ کانسٹبل زخمی ہوئے جبکہ جمعہ کے روز نوشہرہ میں ہوئے دو زور دار دھماکوں کے نتیجہ میں میجر اور ایک اہلکار کی ہلاکت ہوئی اور اسی روز سندر بنی میں فوج کے ساتھ کام کرنے والا پورٹر سنائپر کا نشانہ بن کر لقمہ اجل بن گیا ۔