حد بندی کمیشن کی مجوزہ ملاقاتیں

 سرینگر//’اپنی پارٹی‘ صدر سید الطاف بخاری نے کہا ہے کہ اپنی پارٹی لیڈران کا وفد حد بندی کمیشن سے ملاقات کرکے ر اپنا نقطہ نظر پیش کرے گا۔ پارٹی ہیڈکوارٹر لال چوک میں منعقد ایک تقریب کے حاشیے پر میڈیا سے گفتگو کے دوران بخاری نے کہاکہ اگر چہ انہوں نے 24جون 2021 کو نئی دہلی میں کل جماعتی اجلاس کے دوران یہ گذارش کی تھی کہ جموں وکشمیر میں حد بند ی عمل کا انتظار کئے بغیر ہی اسمبلی انتخابات کرائے جائیں لیکن مرکزی قیادت نے ایسا کرنے سے انکار کردیا۔انہوں نے کہا’’مرکزی قیادت نے کہاکہ جموں وکشمیر کی حد بندی کو آسام کے ساتھ جوڑا نہیں جاسکتا ، جہاں یہ عمل ملتوی کر کے الیکشن کروائے گئے تھے، یہاں اِس لئے ضروری ہے کہ کیونکہ جموں وکشمیر میں نشستوں کی تعداد تنظیم ِ نو کے بعد بڑی ہے‘‘۔ اپنی پارٹی نے فیصلہ کیا ہے کہ جموں اور سرینگر میں دونوں جگہوں پر حد بندی کمیشن کے سامنے اِس پورے عمل سے متعلق اپنا نقطہ نظر رکھا جائیگا ‘‘۔ انہوں نے کہاکہ اپنی پارٹی نے پہلے ہی حد بندی کے حوالے سے ایک عمل مکمل کیا ہے جس میں ماہرین کی خدمات بھی لی گئی تھیں، اب یہ پٹیشن کمیشن کے سامنے پیش کی جائے گی کہ کہاں کہاں اسمبلی حلقے بن سکتے ہیں ، حدود کیا ہوں گے۔ اس سے قبل سابق نیشنل کانفرنس کارکن اعجاز احمد میر ،جنہوں نے راجوار ہندواڑہ سے ضلع ترقیاتی کونسل انتخابات بھی لڑے تھے، نے اپنی پارٹی میں شمولیت اختیار کی ۔