حدمتارکہ کرناہ سیکٹر میں شدید گولہ باری

کپوارہ+پونچھ/اشرف چراغ +حسین محتشم/شمالی ضلع کپوارہ کے کرناہ سیکٹر میں سال 2021کی پہلی فائر بندی کی خلاف ورزی ہوئی جس کے بعد طرفین کے درمیان شدید گولہ باری کا تبادلہ ہوا۔تاہم اس واقعہ میں کوئی ہلاک یا زخمی نہیں ہوا۔جمعہ کی صبح8بجکر30منٹ پر پاکستانی فوج نے لائن آف کنٹرول پر ہندوستان کی اگلی چوکیو ں کو نشانہ بنا کر شدید گولہ باری کی جس کے بعد ہندوستانی فوج نے بھی بھر پور جواب دیا ۔دونو ں طرف کی گولہ باری کی وجہ سے پورا کرناہ علاقہ گن گرج سے دہل اٹھا ۔مقامی لوگو ں کا کہنا ہے کہ گولہ باری اس قدر شدید تھی کہ لائن آف کنٹرول کے نزدیک رہائش پذیر لوگ گھرو ں میں سہم کر رہ گئے اور انہیں یہ بھی فرصت نہیں ملی کہ وہ محفوظ مقامات کی طرف نکلتے۔ادھرسرحدی ضلع پونچھ میں حدِ متارکہ پر جمعرات اور جمعہ کی درمیانی شب گولہ ہوئی جس کی وجہ سے کھڑی کرماڑہ گائوں میں رہائشی مکانوں کو جزوی نقصان ہوا۔دفاعی ترجمان نے بتایا کہ پاکستانی فوج نے جمعرات اور جمعہ کی درمیانی شب ضلع پونچھ میں حدِ متارکہ کے کھڑی کرماڑہ سیکٹر میں ہندوستانی فوج کی چوکیوں اور آبادی والے علاقوں کو نشانہ بناکر فائرنگ کی اور مارٹر گولے داغے۔انہوں نے کہا کہ اس دوران حدِ متارکہ کی حفاظت پر مامور فوجی اہلکار پاکستانی فائرنگ اور مارٹر شلنگ کا موثر اور منہ توڑ جواب دیا۔ تاہم کھڑی کرماڑہ میں کچھ رہائشی ڈھانچوں کو نقصان پہنچا ۔