جموں کے سکولوں میں سمارٹ کلاس رومز کا قیام

جموں//ڈائریکٹر اسکول ایجوکیشن جموں، ڈاکٹر روی شنکر شرما نے اتوار کو یہاں ایک میٹنگ میں جموں شہر کے اسکولوں میں سمارٹ کلاس رومز کے قیام میں ہونے والی پیش رفت کا جائزہ لیا۔ میٹنگ میں چیف ایجوکیشن آفیسر جموں سورج سنگھ راٹھور اور جموں شہر کے ہائیر سیکنڈری سکولوں کے پرنسپل اور زونل ایجوکیشن افسران نے شرکت کی۔تدریس سیکھنے کے عمل کے لیے زیادہ سے زیادہ ٹیکنالوجی کے استعمال اور قومی تعلیمی پالیسی 2020 کے ساتھ دوہری طرز تعلیم کے استعمال پر زور دیا گیا ہے جس میں آن لائن اور آف لائن موڈ شامل ہیں، سکولوں میں سمارٹ کلاس رومز کے قیام کو بہت اہمیت حاصل ہوئی ہے۔ اس ضرورت کو پورا کرنے کے لیے اسکولوں کو تیز تر انٹرنیٹ کنیکشن، نئے ایل اے این سسٹم، کمپیوٹر سسٹم، ڈیسک اور دیگر سامان فراہم کرنا ہوگا۔ ڈاکٹر روی شنکر شرما نے اداروں کے سربراہوں سے کہا کہ وہ جلد از جلد تفصیلی پروجیکٹ رپورٹس بنانے اور جمع کرانے کے عمل کی ذاتی طور پر نگرانی کریں۔ انہوں نے اسکولوں سے کہا کہ وہ منظور شدہ بجٹ کی الاٹمنٹ کے اندر ڈی پی آر تیار کریں۔ انہوں نے اداروں کے سربراہوں کو مزید ہدایت دی کہ وہ پیسے کے ساتھ ساتھ وقت کے لحاظ سے بھی 'زیروویسٹیج پلانز پر کام کریں۔ڈاکٹر شرما نے حاضرین سے کہا کہ وہ عمل درآمد کرنے والی ایجنسیوں کے ساتھ رابطے میں رہیں تاکہ کم از کم مقررہ وقت کے اندر اس عمل کی تکمیل کو یقینی بنایا جا سکے اور ان طلباء کے مزید تعلیمی نقصان سے بچیں جو پہلے ہی کویڈ19 وبائی امراض اور اس کے نتیجے میں اسکولوں کی بندش کی وجہ سے نقصان اٹھا چکے ہیں۔قابل ذکر بات یہ ہے کہ 'اسمارٹ کلاس روم' کے قیام کی پہل حکومت نے 'سمارٹ سٹی' پروجیکٹ کے تحت کی ہے۔