جموں کشمیر مزید مخاصمت برداشت نہیں کرسکتا:پی ڈی پی

اسلام آباد (اننت ناگ )// حکمران جماعت پی ڈی پی لیڈر مفتی سجاد حسین نے کہا کہ جموں کشمیر مزید مخاصمت برداشت نہیں کرسکتا،کیونکہ ریاستی عوام کو کافی برداشت کرنا پڑا۔ جنوبی کشمیر کے کھرم نوشہرہ بجبہاڑہ میں ایک عوامی جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے مفتی سجاد نے پی ڈی پی کو ریاست میں سب سے بڑی پراعتماد آواز قرار دیا۔انہوں نے کہا کہ پی ڈی پی نہ صرف عوام کے جذبات اور احساست کی ترجمانی کرتی ہے،بلکہ جوابدہی،شفافیت اور اہل انتظامیہ کی علامت بھی ہے۔انہوں نے کہا کہ پی ڈی پی کی تاریخ ہے کہ اس جماعت نے ہمیشہ تمام مسائل کو بات چیت سے حل کرنے کی وکالت کی ہے،جبکہ سابق وزیر اعلیٰ مرحوم مفتی محمد سعید نے2002 سے2005تک جو پہل،کی اس سے مباحثہ ہی تبدیل ہوا۔ریاست کی موجودہ صورتحال پر بات کرتے ہوئے مفتی سجاد نے واضح کیا کہ ریاست اب مزید مخاصمت برداشت نہیں کرسکتی،جبکہ ریاست کی ترقی اور امن کیلئے مشترکہ طور پر رائے عامہ منظم کرنے کی ضرورت ہے۔وزیر اعلیٰ محبوبہ مفتی کی سراہنا کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ وزیر اعلیٰ نے قیام امن اور مفاہمت کیلئے جو کوششیں کی،اس کے نتائج برآمد ہونے لگے ہوئے ہیں۔مفتی سجاد نے کہا کہ نوجوانوں کو معافی دیکر انکے مستقبل کو روشن کرنے کی پہل ہو یا ریاست میں قیام امن کیلئے مذاکراتی عمل کی منشا،ریاستی حکومت نے جموں کشمیر میں امن کا ماحول بپا کرنے کیلئے پیش قدمی کی ہے۔ان کا کہنا تھا کہ یہ حکومت کی کار کردگی ہے کہ جموں کشمیر ایم جی نریگا اسکیم کو لاگو کرنے میں سر فہرست ہے۔پی ڈی پی اور بی جے پی کے درمیان حکومتی اتحاد کا ذکر کرتے ہوئے مفتی سجاد نے کہا کہ یہ اتحاد ریاست کی بہتری کیلئے ایک ایجنڈا اور پالیسی کے تحت عمل میں لایا گیا،جبکہ حکومت اس ایجنڈے پر عمل پیرا ہوکر ریاست کے تینوں خطوں میں ترقیاتی کام کر رہی ہے۔