جموں کشمیرحکومت کافیصلہ میڈیکل کالجوں کی15فیصدنشستوںپر کُل ہندکوٹاسے انتخاب

سرینگر//جموں و کشمیر حکومت نے رواں سال سے کل ہند کوٹا کے لیے میڈیکل نشستوں کا 15 فیصد دینے کا فیصلہ کیا ہے۔ پیشہ وارانہ داخلہ امتحانات کے بورڈ برائے جموں کشمیر(بوپی)نے کہا ہے کہ نیشنل ٹیسٹنگ ایجنسی (این ٹی اے)نئی دہلی نے انڈر گریجویٹ میڈیکل میں داخلے کے لیے این ای ای ٹی،انڈر گریجویٹ2022 کیلئے17جولائی2022کو انڈر گریجویٹ میڈیکل کورسوں کیلئے امتحانات کا انعقاد کیا اور7ستمبر کو مذکورہ ٹیسٹ کے نتائج ظاہرکئے۔’صحت اور خاندانی بہبود کی وزارت، نے جموں کشمیراور لداخ سے تعلق رکھنے والے ان امیدواروں کا نتیجہ 26 ستمبر کو بورڈ کو فراہم کیا، جنہوں نے قومی اہلیت کے داخلہ ٹیسٹ میں شرکت کی تھی۔بوپی نے اہل امیدواروں کو مزید مطلع کیا ہے کہ موجودہ سال یعنی 2022 سے، حکومت جموں و کشمیر نے ہدایات کے مطابق کل ہند کوٹا کے لیے 15 فیصد سیٹیں دینے کا فیصلہ کیا ہے۔بورڈ نے مزید کہا ہے کہ وہ اہل امیدواروں کی آن لائن یا آف لائن رجسٹریشن کے شیڈول کو الگ سے مطلع کرے گا اور اہل یاخواہشمند امیدواروں کو مشورہ دیا جاتا ہے کہ وہ روزانہ اپ ڈیٹس کے لیے BOPEEکی ویب سائٹ سے رابطے میں رہیں اور تمام متعلقہ دستاویزات رجسٹریشن کے لیے اپنے پاس تیار رکھیں۔نوٹیفکیشن میںمزید کہا گیا ہے کہ، وہ امیدوار جو ’این ای ای ٹی‘ انڈر گریجویٹ میں دوسری ریاستوں یا مرکزی زیر انتظام خطوںسے آئے ہیں اور جن کے رول نمبر بوپی کی فہرست میں نہیں ہیں،تاہم وہ جموں و کشمیر اور لداخ سے تعلق رکھنے کا دعوی کرتے ہیں انہیں تمام متعلقہ دستاویزات بوپی آفس جموں یا سری نگر میں بذات خود 3اکتوبر2022تک جمع کرانی ہوں گی۔