جموں صوبائی دارالحکومت میں بارش کے باوجود احتجاجوںکا سلسلہ جاری رہبر کھیل اساتذہ ،رہبر جنگلات اور این وائی سی رضاکار مطالبات کے حق میں پابہ شعلہ

جموں// صوبائی دارالحکومتی شہرجموں میں جمعرات کو بھی مختلف ملازمین کا احتجاج جاری رہا۔رہبر کھیل ،رہبر جنگلات ملازمین اور این وائی سی رضاکاروںنے بھی اپنی مانگوں کو لیکر احتجاج کیا ۔ گزشتہ کئی دنوں سے بی جے پی کی ریاستی یونٹ کے دفتر کے باہر احتجاجی دھرنے پر بیٹھے رہبر جنگلات ملازمین نے ایک منصفانہ اور عقلی پالیسی بنانے تک لیفٹیننٹ گورنر منوج سنہا سے اپیل کی ہے کہ وہ انہیں انصاف فراہم کریں۔ادھر رہبر کھیل کے تحت تعینات اساتذہ نے اپنی مانگوں کو لے کر سڑکوں پر آکر احتجاجی مظاہرئے کئے اور لوہری کے تہوار کو کالی لوہڑی کے طور منایا۔احتجاجی ملازمین نے بتایا کہ پچھلے تین ہفتوں سے وہ احتجاج پر بیٹھے ہوئے ہیں لیکن سرکار اْن کی جائز مانگوں کی اور کوئی توجہ نہیں دے رہی ہیں۔انہوں نے بتایا کہ احتجاج کی خاطر وہ کشمیر سے جموں آئے لیکن اس کے باوجود بھی انتظامیہ ٹس سے مس نہیں ہو رہی ہیں۔انہوں نے مزید کہاکہ انتظامیہ نے حال ہی میں رہبر کھیل کے تحت تعینات ٹیچروں کے حوالے سے ایک آرڈر نکالا جو ناقابل برداشت ہے اور اس کو فوری طورپر کالعدم قرار دینے کی ضرورت ہے۔ دریں اثناء این وائی سی رضاکار بھی اپنے مطالبات کے حق میں مسلسل برسر احتجاج ہیں اور وہ بھی مستقل جاب پالیسی کا مطالبہ کررہے ہیں۔