جموں سری نگرقومی شاہراہ پر ٹریفک کی روانی جاری | مسافر ٹرانسپورٹ دو طرفہ جبکہ مال بردار ٹریفک یکطرفہ چلتارہا

رام بن//جموں سری نگر قومی شاہراہ بدھ کو بھاری موٹر گاڑیوں کی یک طرفہ ٹریفک اور ہلکی اور درمیانی مسافر گاڑیوں کی دو طرفہ ٹریفک کے لیے کھلی رہی۔ٹریفک حکام نے بتایا کہ جموں سری نگر قومی شاہراہ کے دونوں طرف سینکڑوں مسافر چھوٹی موٹر گاڑیاں، پرائیویٹ کاریں چلتی رہیں جبکہ دھر روڈ جکھانی ادھم پور سمیت مختلف مقامات پر پھنسے ہوئے بھاری موٹر گاڑیوں (ٹرکوں) کو بھی بدھ کو کشمیر کی طرف جانے کی اجازت دی گئی۔سیکٹر افسران کی ٹریفک پولیس نیشنل ہائی وے رام بن اور بانہال نے بتایا کہ سیکڑوں گاڑیاں بشمول تیل، گیس، پیٹرول ڈیزل کے ٹینکرز اور سبزیاں، مرغی، بھیڑ بکریاں اور دیگر ضروری اشیا لے جانے والے ٹرک کشمیر کی طرف جا رہے ہیں۔یہاں اس بات کا تذکرہ ضروری ہے کہ اس سے قبل ہفتہ کو مگرکوٹ اور اتوار کو دیول سمرولی ادھم پور میں سڑک بند ہونے کی وجہ سے ادھم پور سے آگے حکام کی طرف سے روکے گئے وادی جانے والے لوڈ کیریئرز کو بدھ کو چار دن بعد کشمیر کی طرف جانے کی اجازت دی گئی۔دریں اثناء جموں و کشمیر ٹریفک پولیس ہیڈ کوارٹر نے آئندہ چند دنوں کے لیے ہندوستان کے محکمہ موسمیات کی طرف سے جاری کردہ خراب موسم کی وارننگ کے پیش نظر مسافروں کو مشورہ دیا کہ وہ جموں سری نگر نیشنل ہائی وے پر ٹریفک کنٹرول یونٹ سری نگر، رام بن سے سڑک کی حالت کی تصدیق کے ساتھ سفر نہ کریںتاہم، مناسب موسم اور سڑک کے اچھے حالات کے تحت، نجی کاروں، مسافر ہلکی موٹر گاڑیوں کو ہائی وے کے دونوں طرف چلنے کی اجازت ہوگی جبکہ بھاری موٹر گاڑیوں (ٹرکوں) کو جمعرات کو جموں کی طرف جانے کی اجازت ہوگی۔ یہ رپورٹ درج ہونے تک ٹرکوں کا ایک قافلہ سست رفتاری سے کشمیر کی طرف بڑھ رہا ہے۔