جموں۔پٹھانکوٹ شاہراہ پر ٹھنڈی کھوئی میں ٹول پلازہ کی تعمیر کے خلاف احتجاج شروع

جموں//جموں۔پٹھانکوٹ شاہراہ پر ٹول پلازہ کی مجوزہ تعمیر کے خلاف سانبہ ضلع کے ٹھنڈی کھوئی میں زبردست احتجاجی مظاہرے جاری ہیں۔سرپنچ پنچایت دھامور سکھجندر سنگھ (پولا) نے بتایا"ہم مقامی پنچایت ممبران سے مشورہ کیے بغیر کی طرف سے ٹول پلازہ کی تعمیر کی مخالفت کر رہے ہیں کیونکہ اس سے رہائشی مکانات اور تجارتی مقامات اکھڑ سکتے ہیں"۔ انہوں نے کہا کہ وہ پچھلے پانچ چھ دنوں سے تعمیراتی کام کے خلاف برسر احتجاج ہیں جو اخبارات میں شائع ہونے والے نوٹیفکیشن کے بعد تجویز کیا جا رہا ہے۔انہوں نے کہا"ہمیں یقین دہانی کرائی گئی تھی کہ ٹول پلازہ سانبہ کے ٹھنڈی کھوئی میں تعمیر نہیں کیا جائے گا جو ایک سیاحتی مقام ہے کیونکہ ملک کے مختلف علاقوں اور جموں و کشمیر سے لوگ اس جگہ کا دورہ کرتے ہیں اور اس کی تعمیر سے خاندان بھی بے گھر ہو جائیں گے" ۔انہوں نے کہا کہ حکومت ہمیں معاوضے کی منصوبہ بندی کے بارے میں بتائے اور مطالبہ کیا کہ وہ ٹھنڈی کھوئی میں پلازہ کی تعمیر کی اجازت نہیں دیں گے۔ان کا کہناتھا"ہم چاہتے ہیں کہ ٹول پلازہ رہائشی یا تجارتی جگہ سے دور ریاستی زمین پر تعمیر کیا جائے" ۔انہوں نے کہا کہ آبادی والے علاقے کے وسط میں تعمیر کرنے سے اس کے منفی اثرات مرتب ہوں گے۔انہوں نے کہا کہ انہوں نے اپنے مطالبات کے حق میں یکم فروری 2022 کو سڑک بلاک کرنے کا فیصلہ کیا ہے (بالواسطہ طور پر ہائی وے کا حوالہ دیتے ہوئے)۔انہوںنے مزید کہا"پنچایت کانفرنس بھی ہماری حمایت میں آئی ہے ‘‘۔