جام کے باوجود قومی شاہراہ پر ٹریفک رواںدواں

محمد تسکین

بانہال// جمعرات کے روز جموں سرینگر قومی شاہراہ پر گاڑیوں کی آمد و رفت جاری ہے تاہم بانہال اور رام بن کے درمیان کئی مقامات وقفے وقفے کا ٹریفک جام بھی رہا۔ جمعرات کی صبح سے ہی تیز دھوپ نکلی ہوئی تھی تاہم بانہال کے علاقوں میں سہہ پہربعد سے مطلع آبر و الود ہوا اور گرمی کی شدت سے لوگوں کو کسی حد تک راحت ملی۔ٹریفک پولیس حکام نے کشمیر عظمی کو بتایا کہ جمعرات کی صبح سے ہی مسافر گاڑیوں کو دو طرفہ ٹریفک میں چلنے کی اجازت تھی تاہم مسافر گاڑی والوں کو ادھم پور اور قاضی گنڈ کے علاقوں کو صبح چھ بجے سے دن کے ایک بجے تک دیئے گئے کٹ آف ٹائم کے اندر اندر اپنی منزلوں کی طرف نکلنا تھا۔ انہوں نے کہا کہ بیشتر مسافر بردار ٹریفک کو نکالنے کے بعد قاضی گنڈ سے ٹرکوں کو جموں کی طرف جانے کی اجازت دی گئی۔ انہوں نے کہا کہ کہ ناشری ، رام بن اور بانہال کے درمیان شاہراہ پر ڈھلواس ، مہاڑ ، بیٹری چشمہ ، پنتھیال ، رامسو ، شیر بی بی وغیرہ کے مقامات پر شاہراہ کی حالت خراب اور کئی جگہوں پر یکطرفہ ٹریفک کے ہی قابل ہے اور ان مقامات پر ٹریفک کی نقل وحرکت سست رفتاری کا شکار ہو جاتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس کے علاوہ سالانہ ہجرت پر جموں سے وادی کشمیر کی طرف جانے خانہ بدوش بکروالوں کے کئی ریوڑھ بھی شاہراہ پر محو سفر ہیں اور اس وجہ سے بھی کئی مقامات پر وقتی ٹریفک جام رہا اور ٹریفک کی رفتار سست روی کا شکار رہا۔