ترال کے 2جنگجوئوں کے بھائی تھانے میں بند

اونتی پورہ//اسلامک یونیورسٹی اونتی پورہ میںزیر تعلیم طالب علم کو رہا نہ کرنے کے خلاف بدھ کو طلباء نے کلاسوں کا بائیکاٹ کر کے احتجاجی مظاہرے کئے ، جنہیں منتشر کرنے کیلئے پولیس نے شلنگ کی۔اسلامک یونیورسٹی سائنس اینڈ ٹیکنالوجی اونتی پورہ میں زیر تعلیم ایک طالب علم جنیداحمد آخون ولد غلام محمد آخون ساکن آرم پورہ میڈورہ ترال کی گرفتاری کے خلاف بدھ کو ادارے میں زیر تعلیم طلباء نے کلاسوں کا بائیکاٹ کر کے طالب علم کو رہا نہ کرنے کے خلاف احتجاج کیا۔ احتجاجی طلباء سرینگر جموں شاہراہ تک مارچ کرتے ہوئے آئے لیکن پولیس نے احتجاجی طلباء پر آنسو گیس کے گولے داغ کرانہیںمنتشر کر کے شاہرہ کی طرف پیش قد می ناکام بنا دی ہے۔ کچھ طلبا ء نے الزام لگایا کہ پولیس نے آنسو گیس کے گولے یونیورسٹی کیمپس کے اندر بھی داغے ، تاہم پولیس نے اسکی تردیدکی ۔جنید احمد آخون ایک سرگرم جنگجو کا بھائی ہے جسکو کو چند روز قبل پولیس نے اونتی پورہ تھانے پر بلانے کے بعد بند کیا ہے جبکہ علاقے کے ایک اورسرگرم جنگجو کے بھائی یونس نبی بٹ ولد غلام نبی بٹ ساکن نودل ترال کو بھی اسی روز نا معلوم وجوہات کی بناء پر گرفتار کر کے بند رکھا گیا ہے جنہیں تاحال رہا نہیں کیا گیا ہے۔ اسلامک یونیورسٹی میں دوسری مرتبہ احتجاج کیا گیا۔