بی جے پی جموں کے لوگوں کی توقعات پرکھرااترنے میں ناکام :شگوترہ

جموں//پی ڈی پی ۔بی جے پی کااتحادموقعہ پرستی کی مثال قراردیتے ہوئے یوتھ کانگریس نے کہاکہ صرف اقتدارکی خاطرمخالف ایجنڈوں کی حامل جماعتیں ایک ساتھ ہیںاورتینوں خطوں کے شہری حکومت کی غلط پالیسیوں سے نالاں ہیں اوران میں شدیدناراضگی پائی جاتی ہے۔یوتھ کانگریس نے مزیدکہاکہ بی جے پی کو2014 لوک سبھااوراسمبلی انتخابات میں جموں کے لوگوں نے جوش وخروش کے ساتھ ووٹ دے کرمنڈیٹ دیاتھا لیکن پی ڈی پی نے لوگوں کے مسائل کی ترجمانی اورامنگوں کوپورانہیں کیا۔ان خیالات کااظہار پردیش یوتھ کانگریس کے لیڈران نے یہاں منعقدہ جموں ویسٹ اسمبلی حلقے میں یوتھ کانگریس کی ایک کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔کنونشن کاانعقاد رکی ڈلوترہ پردیش یوتھ کانگریس سیکریٹری اور وشوشرما اے وائی سی صدرجموں ویسٹ نے کیاتھا۔ششی پال سنگھ کھیروالہ نیشنل سیکریٹری آئی وائی کی کنونشن میں مہمان خصوصی تھے۔اس دوران شیش کیہریوالہ نے کہاکہ لوگ بنیادی سہولیات کیلئے ترس رہے ہیں جبکہ وزیر اپنی آنکھیں موند کر عوامی مشکلات سے بے خبرہیں۔شیش پال نے کہاکہ جموں خطہ میں لوگ بدانتظامی سے سخت پریشان ہیں۔انہوں نے کہاکہ گذشتہ تین سالوں سے لوگ مشکلات میں مبتلاہیں اورریاستی حکومت خواب غفل تمیں مبتلاہے۔انہوں نے کہاکہ لوگوں نے بی جے پی لیڈرکو50ہزارسے زائدووٹوں کی لیڈسے ویسٹ اسمبلی حلقے میں جتایاتھالیکن آج لوگ پچھتارہے ہیں۔اس موقعہ پر پردیش یوتھ کانگریس کے صدرپرنوشگوترہ نے کہاکہ جموں کشمیرکی تاریخ میں پی ڈی پی۔بی جے پی حکومت کادوراقتدارسیاہ ترین دورثابت ہواہے۔انہوں نے کہاکہ مخلوط حکومت عوام کی امنگوں پرکھرااترنے میں ناکام ہوچکی ہے۔انہوں نے کہاکہ بی جے پی صرف اقتدارکی بھوک ہے۔