بیروزگاری سے نوجوان مایوسی کا شکار:نیشنل کانفرنس

سرینگر//2019 سے جاری بے چینی اور غیر یقینیت سے جموں وکشمیر کی معیشت تباہ و بردار ہوکر رہ گئی ہے اور اس صورتحال کا براہ راست اثر عام لوگوں پر پڑا ہے۔ ان باتوں کا اظہار نیشنل کانفرنس کے لیڈران نے اننت ناگ میں پارٹی عہدیداروں کے ایک اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔اجلاس کا انعقاد پارٹی کے سرکردہ لیڈرپیر عبدالغنی شاہ ویری کی ساتویں برسی کے موقع پر کیا گیا تھا۔ اجلاس میں جنوبی زون صدر ڈاکٹر بشیر احمد ویری، رکن پارلیمان حسنین مسعودی، ضلع صدر اننت ناگ الطاف احمد کلو، ضلع صدر کولگام ایڈوکیٹ عبدالمجید لارمی، ترجمان عمران نبی ڈار ،ایڈوکیٹ ریاض احمد خان، ڈی ڈی سی چیئرمین محمد یوسف گورسے،سید صبا شفیع بھی موجود تھے ۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے پارٹی لیڈران نے کہا کہ نئی دلی کے غلط فیصلوں کا خمیازہ زمینی سطح پر غریب عوام کو بھگتنا پڑ رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ریکارڈ توڑ بے روزگاری سے نوجوان مایوسی کے شکار ہوتے جارہے ہیں ، جو ایک انتہائی تشویشناک امر ہے۔ پارٹی لیڈران نے کہا کہ موجودہ غیر یقینیت کی صورتحال میں یہاں کا نوجوان اندھیروں کی طرف جارہاہے کیونکہ اُسے کہیں اُمید کی کرن نظر نہیں آرہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ جموںوکشمیرکی خصوصی پوزیشن کی بحالی سے ہی یہاں کے تمام مسائل حل ہوسکتے ہیں۔ پارٹی لیڈران نے مرحوم رہنما الحاج پیر عبدالغنی شاہ ویری کو خراج عقیدت پیش کرتے ہوئے کہا کہ مرحوم ایک معروف سیاست دان تھے۔ مرحوم نے ریاست کے لوگوں کی فلاح و بہبود اور تعمیر و ترقی کیلئے قابل قدر کام کیا ۔