بھاری برفباری سے نظام زندگی درہم برہم ۔18جنوری تک موسم سرد رہیگا،فضائی رابطہ بحال، سرینگر جموں شاہراہ کھل گئی

 بلال فرقانی +محمد تسکین

سرینگر+بانہال// سرینگر میں گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران موسم کی پہلی برف باری ہوئی، وہیں اس عرصے کے دوران بالائی علاقوںپر شدید برف باری ہوئی۔محکمہ موسمیات نے ہفتہ کو کہا کہ جموں و کشمیر اور لداخ میں 18 جنوری تک خشک اور عام طور پر ابر آلود موسم کی توقع ہے۔محکمہ موسمیات کے مطابق ہفتے کوپھسلن والی سڑکیں، ٹھنڈی ہوائیں اور صاف آسمان نے وادی میں معمول کی زندگی کو متاثر کیا۔

 

ادھرسرینگر کے ہوائی اڈے پر فلائٹ آپریشن جمعہ کو منسوخ کر دیا گیا تھا جبکہ سرینگر جموں شاہراہ ہفتہ کو دوسرے دن بھی کچھ مقامات پر پتھراؤ اور لینڈ سلائیڈنگ کی وجہ سے جزوی طور بند رہی۔موسمیات کا کہنا ہے کہ15 سے 18 جنوری تک خشک موسم لیکن رات کے درجہ حرارت میں تیزی سے کمی آنے کا امکان ہے۔محکمہ کے مطابق19 جنوری کوایک اور کمزور مغربی ہوائوں کا مرحلہ متوقع ہے۔ادھر شاہراہ رام بن کے علاقے میں ناشری اور بانہال کے درمیان مہاڑ اور مزید2 -3 دیگر مقامات پر لینڈ سلائیڈنگ کے علاوہ بانہال، ٹنل ایریا اور قاضی گنڈ کی طرف اس کے شمالی ٹیوب میں برف باری کی وجہ سے بند ہوگئی۔ بانہال اور ٹنل کے علاقے میں مسلسل بارش اور برف باری کی وجہ سے سڑک پر پھسلن ہوگئی اور سرینگر یا جموں کی طرف سے گاڑیوں کی آمدورفت کی اجازت نہیں دی گئی۔ تاہم شام کے وقت مہاڑ اوربیٹری چشمہ کے علاقے میں پھنسی ہوئی کچھ ہلکی گاڑیوں کو کلیئر کر دیا گیا۔ لیکن پھر بارش شروع ہوگئی اور مزید نقل و حرکت رک گئی۔شاہراہ ہفتے کی صبح موسم میں تبدیلی آنے کیساتھ ہی بحال کی گئی اور گاڑیوں کو جانے کی اجازت مل گئی۔حکام نے بتایا کہ کم از کم 2000 گاڑیاں ،جن میں زیادہ تر ٹرک اور آئل ٹینکر شامل ہیں ،شاہراہ پر مختلف مقامات پر پھنسے ہوئے ہیں،جن میں نگروٹہ بائی پاس، سدھرا بائی پاس، سانبہ،مانسر، ادھم پور، بٹل، منوال، دھار روڈ، چننی،رام بن، بانہال اور قاضی گنڈ علاقہ شامل ہیں۔ادھرموسم میں بہتری کے ساتھ ہی سرینگر ہوائی اڈے پر فلائٹ آپریشن دوبارہ شروع ہو گیا ۔حکام نے بتایا کہ برف باری اور خراب حد نگاہ کی وجہ سے ایک دن کی تاخیر اور منسوخی کے بعد ہفتہ کو سرینگر ہوائی اڈے پر فلائٹ آپریشن دوبارہ شروع ہوا۔ایک ٹویٹ میں ہوائی اڈے کے ترجمان نے کہا کہ رن وے سے برف ہٹا دی گئی ہے۔ انہوں نے کہا، “اب رن وے سے برف صاف ہو گئی ہے اور حد نگاہ 3000 میٹر ہے ۔انہوں نے کہا کہ جمعہ کو صرف چار پروازیں چل سکیں جبکہ باقی 66 خراب موسم کی وجہ سے منسوخ کر دی گئیں۔اس دوران سرینگر میں منفی 0.1 ، پہلگام میں منفی 5.9 اور گلمرگ میں منفی 11 ڈگری سیلسیس کم از کم درجہ حرارت ریکارڈ کیا گیا۔کرگل میں منفی 8.4 اور لیہہ میں منفی 12 درجہ حرارت تھا۔جموں میں 6.6، کٹرہ میں 5.8، بٹوٹ منفی 1.3، بانہال میں منفی 0.2 اور بھدرواہ میں منفی 0.6 ڈگری کم سے کم درجہ حرارت رہا۔