’ بھارت کا نام روشن کروں گا‘ | سرینڈر جنگجو کا پیغام

سرینگر//کلورہ شوپیان میں جمعہ کے روز ہونے والے ایک تصادم کے دوران خود سپردگی اختیار کرنے والے جنگجو، جو یونانی میڈیسن میں ڈگری حاصل کررہا تھا، نے فوج کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں اب پڑھائی مکمل کر کے بھارت کا نام روشن کروں گا۔ عادل رشید بٹ ساکن اونتی پورہ پلوامہ کو ایک ویڈیو میں یہ کہتے ہوئے سنا جاسکتا ہے: 'میں فوج کا شکر گذار ہوں کہ انہوں نے مجھے سرینڈر کرنے کا موقع دیا، اب میں میڈیکل کی پڑھائی پوری کروں گا اور بھارت کا نام روشن کروں گا'۔ کرنل اے کے سنگھ جو اس آپریشن کی سربراہی کر رہے تھے، نے جنگجوؤں کو خود سپردگی اختیار کرنے کی پیشکش کی۔کرنل سنگھ کو جب یہ معلوم ہوا کہ پھنسے ہوئے جنگجوؤں میں ایک جنگجو عادل رشید بٹ بی یو ایم ایس کی ڈگری کر رہا ہے تو انہوں نے موصوف جنگجو کے ساتھ فوری طور رابطہ کر کے اسے خود سپردگی کر کے ڈگری مکمل کرنے کی پیشکش کی۔بعد ازاں عادل نے کرنل کی اس یقین دہانی کہ انہیں نارمل زندگی گزرانے کی اجازت دی جائے گی، پر خود سپردگی اختیار کی۔ عادل رشید 21 اگست کو لاپتہ ہوا تھا اور گھر والوں نے اس کو گھر واپس لوٹنے کی اپیل کی تھی۔ حالیہ برسوں کے دوران پہلی بار ایسا ہوا ہے کہ کسی جنگجو نے تصادم کے دوران خود سپردگی اختیار کی ہے۔