بھارت چین فوجی مذاکرات کا 12واں دور

نئی دہلی //ہندوستان اور چین نے ہفتے کے روز اعلیٰ سطحی فوجی مذاکرات کا ایک اور دور منعقد کیا، جس کا مقصد مشرقی لداخ کے بقیہ متنازعہ مقامات سے فوجوں کی واپسی کے عمل کو آگے بڑھانا ہے تاکہ 14 ماہ سے زائد کا تنازعہ ختم ہو سکے۔ سکیورٹی اسٹیبلشمنٹ ذرائع نے بتایاکہ کور کمانڈر سطح کے مذاکرات کا 12 واں دور مشرقی لداخ میں لائن آف ایکچول کنٹرول (ایل اے سی) کے چینی جانب مولڈو بارڈر پوائنٹ پر ہوا ۔ مذاکرات صبح 10:30 بجے شروع ہوئے۔مذاکرات کے بارے میں ذرائع نے بتایا کہ بھارت ہاٹ اسپرنگس اور گوگرا میں دستبرداری کے عمل کے مثبت نتائج کے لیے پرامید ہے۔مذاکرات کا تازہ ترین دور ساڑھے تین ماہ سے زائد کے وقفے کے بعد ہوا۔ فوجی مذاکرات کا 11 واں دور 9 اپریل کو ایل اے سی کے ہندوستانی جانب چشول بارڈر پوائنٹ پر ہوا تھا اور یہ تقریبا 13 گھنٹے تک جاری رہا تھا۔